ہوم » نیوز » اسپورٹس

آئی پی ایل میں ختم ہوئی مہندر سنگھ دھونی کی بادشاہت، پہلی بار چنئی سپرکنگس پلے آف کی ریس سے باہر

چنئی سپرکنگس (Chennai Super Kings) نے تین بار آئی پی ایل کا خطاب جیتا اور اس کی ٹیم نے ہر بار پلے آف میں جگہ بنائی، لیکن آئی پی ایل 2020 اس کے لئے بدقسمت ثابت ہوا۔

  • Share this:
آئی پی ایل میں ختم ہوئی مہندر سنگھ دھونی کی بادشاہت، پہلی بار چنئی سپرکنگس پلے آف کی ریس سے باہر
آئی پی ایل میں ختم ہوئی مہندر سنگھ دھونی کی بادشاہت، پہلی بار چنئی سپرکنگس پلے آف کی ریس سے باہر

نئی دہلی: انڈین پریمیئر لیگ میں یوں تو 8 ٹیمیں حصہ لیتی ہیں، لیکن اس ٹورنامنٹ میں ایک ایسی ٹیم تھی، لیکن اس ٹورنامنٹ میں ایسی ٹیم تھی، جس کے فین تمام ٹیموں کے مداح ہوتے تھے۔ اس ٹیم کا پلے آف میں پہنچنا یقینی ہوتا تھا۔ کہا جاتا تھا کہ آئی پی ایل کے پلے آف میں کھیلنے کے لئے 8 نہیں بلکہ 7 ہی ٹیموں کے درمیان ٹکر ہوتی ہے کیونکہ چنئی سپرکنگس (Chennai Super Kings) کی انٹری اس میں یقینی ہوتی ہے۔ تاہم آئی پی ایل 2020 میں سب کچھ بدل گیا۔ مہندر سنگھ دھونی کی ٹیم کا وقت بدل گیا، نتیجہ بدل گیا اور وہ ریکارڈ بھی بدل گیا جو سال 2008 سے چنئی سپرکنگس کی ٹیم کے ہر کھلاڑی کی چھاتی پر میڈل کی طرح لگتا تھا۔ اتوار کو جیسے ہی راجستھان رائلس نے ممبئی انڈینس کو شکست دی، چنئی سپرکنگس پہلی بار آئی پی ایل کے پلے آف کی ریس سے باہر ہوگئی۔ دھونی کے مداحوں کو پہلی بار آئی پی ایل میں یہ دن دیکھنا پڑ رہا ہے۔


چنئی سپرکنگس کس طرح سے ہوئی باہر


چنئی سپرکنگس (Chennai Super Kings) کے فی الحال آئی پی ایل میں 8 پوائنٹ ہیں۔ اب اگر وہ اپنے باقی بچے ہوئے دو میچ بھی جیت جاتی ہے تو بھی اس کے 12 پوائنٹ ہوں گے۔ وہیں ممبئی انڈینس، دہلی کیپٹلس اور رائل چیلنجرس بنگلور تین ایسی ٹیمیں ہیں، جن کے پاس چنئی سے زیادہ 14 پوائنٹ ہیں۔ اب کولکاتا نائٹ رائیڈرس، کنگس الیون پنجاب، راجستھان رائلس اور سن رائزرس حیدرآباد کی ٹیمیں جن کا ایک دوسرے سے ہی مقابلہ ہونے والا ہے اور اس کے چنئی سے زیادہ یا برابر پوائنٹ ہیں۔ ایسے میں چنئی چنئی پلے آف کی ریس سے باہر ہوگئی۔


چنئی سپرکنگس (Chennai Super Kings) کے فی الحال آئی پی ایل میں 8 پوائنٹ ہیں۔ اب اگر وہ اپنے باقی بچے ہوئے دو میچ بھی جیت جاتی ہے تو بھی اس کے 12 پوائنٹ ہوں گے۔
چنئی سپرکنگس (Chennai Super Kings) کے فی الحال آئی پی ایل میں 8 پوائنٹ ہیں۔ اب اگر وہ اپنے باقی بچے ہوئے دو میچ بھی جیت جاتی ہے تو بھی اس کے 12 پوائنٹ ہوں گے۔


چنئی سپرکنگس کی ہر آئی پی ایل میں کارکردگی

آئی پی ایل کا آغاز 2008 میں ہوا تھا اور دھونی کی ٹیم نے پہلے ہی سیزن میں فائنل تک کا سفر طےکیا۔ حالانکہ فائنل میں اسے راجستھان رائلس سے شکست کا سامنا کرنا پڑا۔ 2009 میں چنئی سپرکنگس کی ٹیم سیمی فائنل تک پہنچی۔ اس کے بعد چنئی سپرکنگس نے 2010 میں اپنا پہلا آئی پی ایل خطاب جیتا۔ 2011 میں بھی دھونی کی ٹیم نے مسلسل دوسری بار چمپئن بننے کا کارنامہ انجام دیا۔ 2012 میں چنئی سپرکنگس رنراپ رہی اور 2013 میں بھی وہ فائنل جیتنے سے محروم رہ گئی۔ سال 2014 میں چنئی سپرکنگس کی ٹیم ایلیمنیٹر میں باہر ہوئی اور 2015 میں چنئی سپرکنگس ایک بار پھر رنراپ رہی۔ 2016 میں چنئی کی ٹیم برخاست رہی اور 2018 میں واپسی کے ساتھ ہی چنئی سپرکنگس نے تیسری بار آئی پی ایل ٹرافی جیتی۔ 2019 میں چنئی کی ٹیم ایک بار پھر فائنل تک پہنچی اور ممبئی میں وہ خطابی مقابلہ ہار گئی، لیکن اس بار 2020 میں چنئی سپرکنگس کا سفر گروپ اسٹیج میں ہی ختم ہوگیا۔
Published by: Nisar Ahmad
First published: Oct 26, 2020 03:49 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading