உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    IPL 2021: ہاردک پانڈیا کی فٹنس پر ٹیم انڈیا کے سلیکٹروں نے بولا جھوٹ؟ جے وردھنے نے کیا بڑا انکشاف

    IPL 2021: ہاردک پانڈیا کی فٹنس پر ٹیم انڈیا کے سلیکٹروں نے بولا جھوٹ؟ جے وردھنے نے کیا بڑا انکشاف

    IPL 2021: ہاردک پانڈیا کی فٹنس پر ٹیم انڈیا کے سلیکٹروں نے بولا جھوٹ؟ جے وردھنے نے کیا بڑا انکشاف

    ممبئی انڈینس کے چیف کوچ مہیلا جے وردھنے نے بتایا کہ آخر کیوں ہاردک پانڈیا (Hardik Pandya) سے آئی پی ایل 2021 میں ٹیم گیند بازی نہیں کرا رہی ہے۔

    • Share this:
      نئی دہلی: ممبئی انڈینس کے کوچ مہیلا جے وردھنے (Mahela Jayawardene) نے جمعہ کو کہا کہ ٹیم ہاردک پانڈیا (Hardik Pandya) کو آئی پی ایل 2021 میں گیند بازی کرنے کو مجبور کرنے کے لئے جلد بازی میں نہیں ہے کیونکہ اگر ایسا کیا گیا تو اسے پریشانی ہوسکتی ہے، جس سے آئندہ ٹی-20 عالمی کپ میں اس کی کارکردگی پر اثر پڑسکتا ہے۔ آئی پی ایل کے دوسرے مرحلے کے پہلے دو میچوں میں نہیں کھیلنے کے بعد ممبئی انڈینس نے ہاردک پانڈیا کو آئندہ میچوں میں صرف بلے باز کے طور پرہی کھلایا۔ اس سے ہندوستان کے لئے منتخب کی گئی ٹی-20 عالمی کپ ٹیم میں ان کے سلیکشن پر سوال اٹھائے جانے لگے اور چیف سلیکٹروں نے کہا کہ ہاردک پانڈیا 17 اکتوبر سے متحدہ عرب امارات اور عمان میں ہونے والے ٹورنامنٹ میں گیند بازی کرنے کے لئے پوری طرح سے فٹ ہیں۔

      حالانکہ جے وردھنے کو ایسا نہیں لگتا اور انہوں نے کہا کہ ممبئی کی فرنچائزی ہاردک پانڈیا کے متعلق ہندوستانی ٹیم کے ’تھنک ٹینک‘ کے ساتھ مسلسل رابطے میں ہیں۔ انہوں نے ہفتہ کو یہاں دہلی کیپٹلس کے خلاف ہونے والے ٹیم کے آئندہ میچ سے پہلے ورچوئل پریس کانفرنس میں صحافیوں سے کہا، ’اس نے (ہاردک پانڈیا) لمبے وقت سے گیند بازی نہیں کی ہے، اس لئے ہم ہاردک پانڈیا کے لئے سب سے بہترین کرنے کی کوشش کر رہے ہیں۔ ہم ہاردک پانڈیا کے معاملے میں ہندوستانی ٹیم منیجمنٹ سے مسلسل رابطے میں ہیں‘۔ مہیلا جے وردھنے کا یہ بیان اس طرف اشارہ کرتا ہے کہ ٹیم انڈیا کے سیلکٹروں نے کہیں نہ کہیں ہاردک پانڈیا کو لے کر پوری بات نہیں بتائی ہے۔

      ٹی-20 عالمی کپ میں جدوجہد کرسکتے ہیں ہاردک پانڈیا

      مہیلا جے وردھنے نے کہا، ’وہ آئی پی ایل میں گیند بازی کرے گا یا نہیں، ہم ہر دن کی بنیاد پر اس کا فیصلہ کریں گے۔ مجھے اس وقت لگتا ہے کہ اگر ہم اسے گیند بازی کرنے کے لئے زیادہ زور دیں گے تو وہ شاید جدوجہد کرسکتا ہے‘۔ ہاردک پانڈیا نے سال 2019 میں پیٹھ کی سرجری سے واپسی کے بعد اتنی گیند بازی نہیں کی ہے، جتنی وہ کیا کرتے تھے۔ حالانکہ مارچ میں انگلینڈ کے خلاف پانچ میچوں کی ٹی-20 سیریز کے دوران انہوں نے باقاعدہ طور پر گیند بازی کی تھی۔ تاہم انہوں نے ہندوستان میں آئی پی ایل کے پہلے مرحلے میں گیند بازی نہیں کی اور متحدہ عرب امارات مرحلے میں بھی گیند بازی میں ان کا استعمال نہیں کیا گیا۔

      ممبئی کا دوسرا مرحلہ کافی خراب رہا ہے، جس میں ٹیم نے چار میں سے صرف ایک میچ جیتا ہے۔ گزشتہ چمپئن ٹیم ابھی ٹاپ-4 سے باہر ہے اور 11 میچوں میں 10 پوائنٹ لے کر پانچویں مقام پر ہے۔ جے وردھنے نے کہا، ’یہ میچ جیتنا کافی اہم تھا۔ ہم اب اتنے ہی پُرجوش ہیں، جتنے ٹورنامنٹ کے شروع ہونے کے وقت پر تھے۔ ہم نے گزشتہ میچ میں کافی اچھی چیزیں کیں، لیکن اب بھی کافی سدھار کی ضرورت ہے‘۔ انہوں نے کہا، ’ہمیں ٹاپ-4 میں جگہ بنانے کے لئے اپنا سب سے بہترین کرکٹ کھیلنا ہوگا‘۔
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: