ہوم » نیوز » اسپورٹس

آئی پی ایل 2021  پر بی سی سی آئی کا بڑا فیصلہ، متحدہ عرب امارات میں ہوں گے باقی 31 میچ

ہندوستانی کرکٹ بورڈ (بی سی سی آئی) متحدہ عرب امارات میں آئی پی ایل 2021 (آئی پی ایل 2021) کے بقیہ میچوں کا انعقاد کرے گا۔

  • Share this:
آئی پی ایل 2021  پر بی سی سی آئی کا بڑا فیصلہ، متحدہ عرب امارات میں ہوں گے باقی 31 میچ
ہندوستانی کرکٹ بورڈ (بی سی سی آئی) متحدہ عرب امارات میں آئی پی ایل 2021 (آئی پی ایل 2021) کے بقیہ میچوں کا انعقاد کرے گا۔

نئی دہلی. ہندوستانی کرکٹ بورڈ (بی سی سی آئی) متحدہ عرب امارات میں آئی پی ایل 2021 (آئی پی ایل 2021) کے بقیہ میچوں کا انعقاد کرے گا۔ بی سی سی آئی (BCCI) کے نائب صدر راجیو شکلا نے یہ اطلاع دی ہے۔ اس سلسلے میں بی سی سی آئی کے خصوصی عمومی اجلاس میں فیصلہ لیا گیا۔ بی سی سی آئی آئی پی ایل کے باقی میچ ستمبر ۔ اکتوبر میں کرانے کی تیاری کر رہا ہے۔ آئی پی ایل 2021 کے بقیہ میچ 19 یا 20 ستمبر سے شروع ہوسکتے ہیں جبکہ فائنل میچ 10 اکتوبر کو متحدہ عرب امارات میں کھیلا جائے گا۔ بی سی سی آئی ٹی 20 ورلڈ کپ سے متعلق حتمی فیصلہ لینے کے لئے آئی سی سی سے جولائی میں توسیع کا مطالبہ کرے گا۔ رواں سال ، ٹی 20 ورلڈ کپ اکتوبر میں نومبر میں بھارت میں تجویز کیا گیا ہے۔ اگر ہندوستان میں صورتحال بہتر نہیں ہوئی تو ورلڈ کپ متحدہ عرب امارات میں بھی ہو سکتا ہے۔ کورونا وبا کی وجہ سے آئی پی ایل 2020 بھی متحدہ عرب امارات میں کھیلا گیا تھا۔


اہم بات یہ ہے کہ بایو ببل میں کئی کھلاڑیوں کے کورونا پازیٹو پائے جانے کے بعد 4 مئی کو بورڈ نے انڈین پریمیر لیگ (آئی پی ایل 2021) کے 14 ویں سیزن کو غیر معینہ مدت کے لئے ملتوی کردیا تھا۔


ٹی 20 ورلڈ کپ کا انعقاد بھارت میں ہونے کی امید

ٹی 20 ورلڈ کپ کی میزبانی کے حق پر حتمی فیصلہ آئی سی سی کو کرنا ہے۔ اس کے لئے 1 جون کو آئی سی سی کا میٹنگ ہوگی۔ گذشتہ سال آسٹریلیا میں ہونے کے بعد ٹی 20 ورلڈ کپ کورونا کی وبا کی وجہ سے رد کردیا گیا تھا جس کے بعد ہندوستان کو میزبانی کا حق ملا تھا۔
بی سی سی آئی کے سچن جے شاہ نے ایک سرکاری بیان میں کہا، "بی سی سی آئی نے سنیچر کو ہندستان میں مانسون کے موسم کے پیش نظر رواں سال ستمبر اکتوبر کے مہینوں میں متحدہ عرب امارات میں ویو انڈین پریمیر لیگ 2021 سیزن کے بقیہ میچ مکمل کرنے کا اعلان کیا۔

رنجی کھلاڑیوں کو نہیں ملی راحت
گھریلو کھلاڑیوں کو ادائیگی کے معاملے پر ایس جی ایم میں کوئی بات چیت نہیں ہوئی۔ کووڈ ۔19 کی وجہ سے رنجی سیزن منسوخ ہونے کی وجہ سے 700 کھلاڑی متاثر ہوئے ہیں۔ بی سی سی آئی نے گزشتہ سال جنوری میں کھلاڑیوں کو مالی اعانت کی یقین دہانی کرائی تھی لیکن اس کے طریقہ کار کے بارے میں کچھ نہیں بتایا تھا۔ معلوم ہوا ہے کہ ریاستی ایسوسی ایشن میں سے ایک نے اس مسئلے کو اٹھایا لیکن سورو گانگولی اور راجیو شکلا نے اسے ایجنڈے کا حصہ نہیں قرار دیتے ہوئے اس کو ٹھکرا کردیا۔
Published by: Sana Naeem
First published: May 29, 2021 01:59 PM IST