உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    IPL 2022: ہاردک پانڈیا نے بطور کپتان پہلا میچ جیتا، ڈیوڈ ملر اور راہل تیوتیا نے الٹ دی بازی

    IPL 2022: ہاردک پانڈیا نے بطور کپتان پہلا میچ جیتا، ڈیوڈ ملر اور راہل تیوتیا نے الٹ دی بازی

    IPL 2022: ہاردک پانڈیا نے بطور کپتان پہلا میچ جیتا، ڈیوڈ ملر اور راہل تیوتیا نے الٹ دی بازی

    IPL 2022: گجرات ٹائٹنس (Gujarat Titans) نے آئی پی ایل کی تاریخ کا اپنا پہلا مقابلہ جیتا۔ ٹیم نے لکھنو سپر جائنٹس کو شکست دی۔ ہاردک پانڈیا (Hardik Pandya) نے بلے سے اچھی کارکردگی پیش کی۔ تیز گیند باز محمد شمی نے شاندار گیند بازی کرتے ہوئے 3 وکٹ حاصل کئے۔

    • Share this:
      ممبئی: گجرات ٹائٹنس (Gujarat Titans) کی ٹیم پہلی بار آئی پی ایل 2022 (IPL 2022) میں اتر رہی ہے۔ آئی پی ایل کے اپنے پہلے مقابلے میں ٹیم نے لکھنو سپر جائنٹس کو 5 وکٹ سے شکست دے دی ہے۔ کپتان ہاردک پانڈیا (Hardik Pandya) نے 33 رنوں کی اچھی اننگ کھیلی۔ بطور کپتان انہوں نے آئی پی ایل میں جیت کے ساتھ آغاز کیا ہے۔ ڈیوڈ ملر اور راہل تیوتیا نے میچ کا رخ بدلا۔ کے ایل راہل (KL Rahul) کی کپتانی والی لکھنو سپر جائنٹس (Lucknow Super Giants) نے پہلے کھیلتے ہوئے 6 وکٹ پر 158 رن بنائے تھے۔ جواب میں گجرات نے ہدف کو 19.4 اوور میں 5 وکٹ پر حاصل کرلیا۔ ٹورنا منٹ کے موجودہ سیزن کی بات کی جائے تو چاروں میچ ہدف کا تعاقب کرنے والی ٹیم نے جیتے ہیں۔

      ہدف کا تعاقب کرنے اتری گجرات ٹائٹنس کی ٹیم حالانکہ اچھی شروعات نہیں کرسکی تھی۔ سلامی بلے باز شبھمن گل (0) پہلے اوور میں دشمنتھا چمیرا کی گیند پر بڑا شاٹ لگانے کے چکر میں آوٹ ہوئے۔ نمبر-3 پر اترے وجے شنکر بھی ناکام رہے۔ وہ چمیرا کی گیند پر صرف چار رن بناکر آوٹ ہوگئے۔ 15 رنوں پر 2 وکٹ گرنے کے بعد میتھیو ویڈ اور ہاردک پانڈیا نے تیسرے وکٹ کے لئے 57 رن جوڑے۔ ہاردک پانڈیا 28 گیندوں پر 33 رن بناکر بڑے بھائی اور بائیں ہاتھ کے اسپنر کنال پانڈیا کی گیند پر آوٹ ہوئے۔ ہاردک پانڈیا نے پانچ چوکا اور ایک چھکا لگایا۔

      دیپک ہڈا نے دیا میتھیو ویڈ کے طور پر بڑا جھٹکا

      آف اسپنر دیپک ہڈا نے بلے کے بعد گیند سے بھی کمال کیا۔ انہوں نے سلامی بلے باز میتھیو ویڈ کو آوٹ کرکے گجرات کا چوتھا جھٹکا دیا۔ ویڈ نے 29 گیندوں پر 30 رن بنائے۔ انہوں نے چار چوکے لگائے۔ اس کے بعد ڈیوڈ ملر اور راہل تیوتیا ٹیم کو سنبھالنے میں جٹے۔ ٹیم کو آخری 5 اور میں 68 رن بنانے تھے اور 6 وکٹ باقی تھے۔

      یہ بھی پڑھیں۔

      بابر اعظم ایک اور بڑے ریکارڈ کے قریب، وراٹ کوہلی سے لے کر وارنر تک کو چھوڑیں گے پیچھے

      16واں اوور بنا میچ کا ٹرننگ پوائنٹ

      میچ کا 16واں اوور میچ کا ٹرننگ پوائنٹ کہا جاسکتا ہے۔ شبنم گرنے کے بعد بھی کے ایل راہل نے دیپک ہڈا کو ان کا تیسرا اوور کرایا۔ اس اوور میں 22 رن بنے۔ راہل تیوتیا اور ڈیوڈ ملر دونوں نے ایک ایک چھکا اور ایک ایک چوکا لگایا۔ اب چار اوور میں 46 رنوں کی ضرورت تھی۔ 17ویں اوور میں روی بشنوئی نے 17 رن دیئے۔ اب تین اوور میں 29 رنوں کی ضرورت تھی۔ اس درمیان ڈیوڈ ملر 21 گیندوں پر 30 رن بناکر اویش خان کا شکار بنے۔ انہوں نے راہل تیوتیا کے ساتھ 34 گیندوں پر 60 رن جوڑے۔ اب 15 گیندوں پر 21 رنوں کی ضرورت تھی۔

       آخری اوور میں بنانے تھے 11 رن

      گجرات ٹائٹنس کو آخری دو اوور میں 20 رن بنانے تھے۔ 19ویں اوور کی پہلی گیند پر ابھینو منوہر نے چوکا لگایا۔ دوسری گیند پر رن نہین بنا۔ تیسری گیند پر ایک رن بنا۔ چوتھی گیند پر تیوتیا رن نہیں بناسکے۔ پانچویں گیند پر چوکا لگایا۔ آخری گیند پر رن نہیں بنا۔ آخری اوور میں 11 رن بنانے تھے۔ ابھینو نے اویش خان کی پہلی گیند پر چوکا لگایا۔ دوسری گیند پر پھر چوکا لگایا۔ تیسری گیند پر ایک رن بنا۔ چوتھی گیند پر راہل تیوتیا نے چوکا لگاکر جیت دلائی۔ راہل تیوتیا نے 24 گیندوں پر 40 رن اور ابھینیو سات گیندوں پر 15 رن بناکر ناٹ آوٹ رہے۔ راہل تیوتیا نے پانچ چوکا اور 2 چھکا لگایا۔ وہیں ابھینیو نے تین چوکے لگائے۔
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: