உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    ٹیم انڈیا کے 8 کھلاڑی، جو ورلڈ کپ کھیلے پر IPL ٹیموں نے Retention کرنے سے کیا منع

    آئی پی ایل (IPL) کی 8 ٹیموں کے بارے میں بات کریں تو انہوں نے 2021 کے ٹی ٹوئنٹی ورلڈ کپ (T20 World Cup 2021) میں شامل 8 ہندوستانی کھلاڑیوں کو برقرار رکھنے سے انکار کر دیا ہے۔

    آئی پی ایل (IPL) کی 8 ٹیموں کے بارے میں بات کریں تو انہوں نے 2021 کے ٹی ٹوئنٹی ورلڈ کپ (T20 World Cup 2021) میں شامل 8 ہندوستانی کھلاڑیوں کو برقرار رکھنے سے انکار کر دیا ہے۔

    آئی پی ایل (IPL) کی 8 ٹیموں کے بارے میں بات کریں تو انہوں نے 2021 کے ٹی ٹوئنٹی ورلڈ کپ (T20 World Cup 2021) میں شامل 8 ہندوستانی کھلاڑیوں کو برقرار رکھنے سے انکار کر دیا ہے۔

    • Share this:
      نئی دہلی. آئی پی ایل 2022 (IPL 2022) کے لیے آج کا دن بڑا ہے۔ ٹی 20 لیگ کی 8 پرانی ٹیمیں برقرار Retention رکھنے والے کھلاڑیوں کے نام سامنے لائیں گی۔ یہ ٹیمیں اپنے ساتھ 4 کھلاڑیوں کو شامل کر سکیں گی۔ ٹی ٹوئنٹی لیگ کے موجودہ سیزن سے 10 ٹیمیں ٹورنامنٹ میں حصہ لے رہی ہیں۔ ٹیموں کا پرس 85 کروڑ روپے سے بڑھا کر 90 کروڑ روپے کر دیا گیا ہے۔ یعنی اس بار کھلاڑیوں کی نیلامی پر زیادہ رقم خرچ کی جائے گی۔ بی سی سی آئی (BCCI) نے حال ہی میں لکھنؤ اور احمد آباد میں ہونے والی ٹی 20 لیگ میں 2 نئی ٹیمیں شامل کی ہیں۔ دونوں کی نیلامی سے بورڈ کو تقریباً 13 ہزار کروڑ روپے بھی ملے ہیں۔

      آئی پی ایل (IPL) کی 8 ٹیموں کے بارے میں بات کریں تو انہوں نے 2021 کے ٹی ٹوئنٹی ورلڈ کپ (T20 World Cup 2021) میں شامل 8 ہندوستانی کھلاڑیوں کو برقرار رکھنے سے انکار کر دیا ہے۔ سب سے پہلے کے ایل راہل (KL Rahul) کی بات کرتے ہیں۔ حال ہی میں انہیں ٹیم انڈیا کی T20 ٹیم کا نیا نائب کپتان بنایا گیا ہے۔ وہ پنجاب کنگز کے کپتان تھے۔ لیکن وہ خود ٹیم سے الگ ہو رہے ہیں۔ ان کے لکھنؤ سے جڑںے کی خبریں آرہی ہیں۔ انہوں نے بطور بلے باز شاندار کارکردگی کا مظاہرہ کیا لیکن ٹیم کی کارکردگی اچھی نہیں رہی۔
      ہاردک پانڈیا اور سوریہ کمار بھی باہر۔۔۔

      جانئے کب ہوگی کھلاڑیوں کی نیلامی، IPL 2022 Mega Auction پر آیا بڑا اپڈیٹ

      ہاردک پانڈیا (Hardik Pandya) فٹنس کی پریشانی سے دوچار ہیں۔ ٹی ٹوئنٹی ورلڈ کپ میں ان کی کارکردگی اچھی نہیں رہی۔ انہیں نیوزی لینڈ سیریز کے لیے بھی منتخب نہیں کیا گیا تھا۔ ان کی جنوبی افریقہ سیریز سے بھی ہٹنے کی خبریں ہیں۔ وہ ابھی گیندبازی کے لیے پوری طرح فٹ نہیں ہیں۔ ٹی ٹوئنٹی میں سوریہ کمار یادو (Suryakumar Yadav) کی کارکردگی اچھی رہی ہے لیکن ممبئی انڈینز (Mumbai Indians) کی جانب سے دونوں کھلاڑیوں کو برقرار رکھنے کا امکان کم ہے۔ لیگ اسپنر راہل چاہر کو بھی برقرار نہیں رکھا جائے گا۔ ممبئی نے سب سے زیادہ 5 بار ٹی 20 لیگ کا خطاب جیتا ہے۔

      دھونی کا چیمپئن کھلاڑی فہرست میں نہیں۔۔۔
      تیز گیند باز شاردل ٹھاکر (Shardul Thakur) نے آئی پی ایل 2021 میں CSK کے لیے شاندار کارکردگی کا مظاہرہ کیا تھا۔ سی ایس کے نے بھی خطاب جیتا لیکن انہیں ٹیم میں برقرار رکھنے کا امکان نہیں ہے۔ اس کے علاوہ آر اشون (R Ashwin) کو بھی T20 ورلڈ کپ میں 4 سال بعد T20 انٹرنیشنل کھیلنے کا موقع ملا تھا۔ دہلی کیپٹلس (Delhi Capitals) کے ذریعے انہیں برقرار رکھنے کی بہت کم امید ہے۔

       

      تیز گیندباز محمد سمیع (Mohammed Shami) اور بھونیشور کمار (Bhuvneshwar Kumar) کی کارکردگی بھی ٹی ٹوئنٹی میں اچھی نہیں رہی۔ محمد سمیع پنجاب کنگز کی طرف سے کھیلے جبکہ بھونیشور نے آئی پی ایل 2021 میں سن رائزرز حیدرآباد سے کھیلا تھا۔ ایسے میں اب یہ تمام 8 کھلاڑی میگا نیلامی میں شامل ہوں گے۔ 2 نئی ٹیموں کی آمد سے ان کھلاڑیوں کا لیگ میں کھیلنا یقینی ہے تاہم سب کی نظریں اس بات پر ہوں گی کہ انہیں نیلامی میں کتنی رقم ملتی ہے۔ 2 نئی ٹیمیں اپنے ساتھ 3-3 کھلاڑی شامل کر سکیں گی۔ لیکن انہیں بعد میں موقع ملے گا۔
      Published by:Sana Naeem
      First published: