உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    سچن تندولکر کو آوٹ کرنے پر Shoaib Akhtar کے پیچھے پڑ گئے تھے ناظرین، گانگولی نے بچائی تھی ’جان‘

    سچن تندولکر کو آوٹ کرنے پر شعیب اختر کے پیچھے پڑ گئے تھے ناظرین

    سچن تندولکر کو آوٹ کرنے پر شعیب اختر کے پیچھے پڑ گئے تھے ناظرین

    IPL 2022: سال 2008 آئی پی ایل کا پہلا سیشن تھا۔ یہ وہی سیزن تھا، جس میں پاکستانی کرکٹر پہلی اور آخری بار بولے۔ انڈین پریمیئر لیگ 2008 میں شعیب اختر کولکاتا نائٹ رائیڈرس کی ٹیم کا حصہ تھے۔ اس سیزن میں سوربھ گانگولی کی کپتانی والی ٹیم کولکاتا نائٹ رائیڈرس کا مقابلہ سچن تندولکر کی ممبئی انڈینس سے ہوا۔ اتنا ہی نہیں کپتان سوربھ گانگولی نے خود شعیب اختر سے کہا تھا کہ تمہیں کس نے سچن کو آوٹ کرنے کو کہا تھا۔

    • Share this:
      نئی دہلی: کرکٹ میدان پر سچن تندولکر اور شعیب اختر کے درمیان ہمیشہ سخت ردعمل دیکھنے کو ملا۔ اپنے کرکٹ کیریئر کے دوران سچن تندولکر نے کئی بار شعیب اختر کو جم کر خبر ملی۔ حالانکہ راولپنڈی ایکسپریس نے انہیں بین الاقوامی کرکٹ میں 8 بار آوٹ کیا۔ دائیں ہاتھ کے اس طوفانی گیند باز نے سچن تندولکر کو انڈین پریمیئر لیگ (IPL 2022) میں بھی آوٹ کیا۔ سال 2008 میں کولکاتا نائٹ رائیڈرس اور ممبئی انڈینس کے درمیان کھیلا گیا یہ میچ شعیب اختر کے لئے ناقابل فراموش بن گیا۔ یہ وہی مقابلہ تھا، جس میں سچن تندولکر کو آوٹ کرنے کے بعد ناظرین نے پاکستانی گیند بازوں کو جم کر گالیاں دی۔ اس کا انکشاف شعیب اختر نے خود کیا۔

      سال 2008 آئی پی ایل کا پہلا سیشن تھا۔ یہ وہی سیزن تھا، جس میں پاکستانی کرکٹر پہلی اور آخری بار بولے۔ انڈین پریمیئر لیگ 2008 میں شعیب اختر کولکاتا نائٹ رائیڈرس کی ٹیم کا حصہ تھے۔ اس سیزن میں سوربھ گانگولی کی کپتانی والی ٹیم کولکاتا نائٹ رائیڈرس کا مقابلہ سچن تندولکر کی ممبئی انڈینس سے ہوا۔ وانکھیڑے میں کھیلے گئے میچ میں کولکاتا کی ٹیم پہلے بلے بازی کرتے ہوئے 67 رنوں پر ڈھیر ہوگئی۔ ممبئی نے 68 رنوں کا ہدف دو وکٹ کے نقصان پر پورا کرلیا۔ اس مقابلے میں شعیب اختر نے سچن تندولکر کو ڈک پر آوٹ کیا تھا، جس کے بعد میدان پر موجود ناظرین کو اچھا نہیں لگا اور انہوں نے شعیب اختر کو گالیاں دیں۔

      یہ بھی پڑھیں۔

      راجستھان رائلس کو بڑا جھٹکا، 2 کروڑ کا گیند باز صرف ایک میچ کھیل کر IPL-2022 سے باہر

      گانگولی بولے- لوگ تمہیں مار دیں گے

      اسپورٹس کیڑا سے بات کرتے ہوئے شعیب اختر نے کہا، ناظرین کے غصے کے سبب سوربھ گانگولی نے میری فیلڈ پوزیشن بدلی تھی۔ ہم نے میچ میں بہت کم اسکور بنایا۔ جب میچ شروع ہوا تو شاندار ماحول تھا۔ یہ سچن تندولکر کا ممبئی شہر تھا۔ یہ سچن اور شعیب اختر کے درمیان مقابلہ تھا۔ میچ کے دوران شاہ رخ خان بھی اسٹیڈیم میں موجود تھے۔ شعیب اختر کے مطابق، میچ سے پہلے ہی میدان پوری طرح بھر گیا تھا۔

      بات چیت کے دوران شعیب اختر نے کہا کہ سچن تندولکر کو آوٹ کرنا میری سب سے بڑی غلطی تھی۔ شعیب اختر کے مطابق، میں نے سچن تندولکر کو پہلے ہی اوور میں آوٹ کر دیا جو میری سب سے بڑی غلطی تھی۔ میں فائن لیگ پر فیلڈنگ کر رہا تھا، مجھے ناظرین نے خوب گالیاں دیں۔ اس دوران سوربھ گانگولی نے مجھ سے کہا کہ مڈوکٹ پر آو۔ یہ لوگ تمہیں مار دیں گے۔ تمہیں کس نے سچن کو آوٹ کرنے کو کہا تھا، وہ بھی ممبئی میں۔
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: