உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    عرفان پٹھان کا بڑا انکشاف، کہا- ڈریسنگ روم میں میرے والد کو دیکھ کر میانداد کی ہوگئی تھی بولتی بند

    عرفان پٹھان نے جاوید میانداد سے متعلق ایک بڑا انکشاف کیا ہے۔

    عرفان پٹھان نے جاوید میانداد سے متعلق ایک بڑا انکشاف کیا ہے۔

    عرفان پٹھان (Irfan Pathan) سال 2004 میں پاکستان (Pakistan) کا دورہ کرنے والی ہندوستانی ٹیم کا حصہ تھے۔

    • Share this:
      نئی دہلی: پاکستان (Pakistan) کے سابق کپتان جاوید میانداد (Javed Miandad) ہندوستانی کھلاڑیوں پربیان بازی کرتے رہتے ہیں۔ یہ آج کی بات نہیں ہے، وہ طویل وقت سے ایسا کر رہے ہیں۔ ایسے ہی ایک واقعہ کے بارے میں سابق ہندوستانی آل راونڈر عرفان پٹھان (Irfan Pathan) نے بتایا۔ انہوں نے بتایا کہ کیسے (Javed Miandad) جاوید میانداد نے انہیں لےکر ایسا بیان دیا تھا جو ان کے والد کو بالکل پسند نہیں آیا۔ حالانکہ جاوید میانداد کی بولتی بند ہوگئی جب عرفان پٹھان کے والد ان سے ملنے پہنچے تھے۔ عرفان پٹھان نے اسٹار اسپورٹس کےشو میں اس بات کا انکشاف کیا۔

      جاوید میانداد نے عرفان پٹھان کو بتایا تھا عام گیند باز

      عرفان پٹھان نے بتایا، مجھے یاد ہے جاوید میانداد نے ایسا کچھ کہا تھا کہ عرفان پٹھان جیسے گیند باز پاکستان کی ہر گلی میں ملتے ہیں۔ میرے والد نے اس خبر کو پڑھا تھا، یہ پڑھنے کے بعد انہیں بالکل بھی اچھا نہیں لگا تھا۔ مجھے اچھی طرح سے یاد ہےکہ سیریز کے آخری میچ میں میرے والد میچ دیکھنے پاکستان آئے تھے۔ وہ میرے پاس آئے اورکہا میں پاکستان کے ڈریسنگ روم میں جانا چاہتا ہوں اور میانداد سے ملنا چاہوں گا، میں نے انہیں منع کیا تھا۔

      جاوید میانداد نے عرفان پٹھان کو عام گیند باز بتایا تھا۔
      جاوید میانداد نے عرفان پٹھان کو عام گیند باز بتایا تھا۔


      عرفان پٹھان کے والد کے سامنے منحرف ہوگئے تھے میانداد

      عرفان پٹھان نے مزید کہا، ’حالانکہ میرے والد نے بات نہیں مانی اور وہ پاکستان کے ڈریسنگ روم میں جا پہنچے۔ جیسے ہی میرے والد کو جاوید میانداد نے دیکھا وہ کھڑے ہوگئے۔ انہوں نےکہا، ’میں نے آپ کے بیٹے کے بارے میں ایسا کچھ بھی نہیں کہا۔ میرے والد صاحب کے چہرے پر ایک عجیب سی مسکراہٹ تھی اور انہوں نےکہا، میں آپ کو کچھ کہنے کےلئے نہیں آیا۔ میں تو آپ سے ملاقات کرنا چاہتا تھا، آپ کافی اچھے کھلاڑی تھے۔

      سال 1999 میں پاکستان کے ساتھ ہوئے کارگل جنگ کے بعد 2004 میں ہندوستان کا یہ پہلا پاکستانی دورہ تھا۔ ہندوستان نے اس دورے پر ٹسٹ سیریز 1-2 سے اور ونڈے سیریز 2-3 سے اپنے نام کی تھی۔ یہ سیریز عرفان پٹھان کے لئے بہت خاص تھی۔ اسی دورے پر ہی ویریندر سہواگ ترپل سنچری لگانے والے پہلے بلے باز بنے تھے۔
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: