ہوم » نیوز » اسپورٹس

انگلینڈ کےتیزگیند بازسے بدسلوکی، نسلی بنیاد پرمیچ کے دوران دی گئی گالیاں

جوفرا آرچرنے ٹوئٹرپرلکھا 'جب میں اپنی ٹیم کوبچانےکےلئے بلے بازی کررہا تھا تب نسلی بنیاد پرگالیاں سننےکوملیں، جس سے میں مایوس ہوں۔ نیوزی لینڈ کرکٹ بورڈ ان سے معافی مانگنے کےلئے رابطہ کرے گا۔

  • Share this:
انگلینڈ کےتیزگیند بازسے بدسلوکی، نسلی بنیاد پرمیچ کے دوران دی گئی گالیاں
اسٹورٹ براڈ اورجوفرا آرچرکو نیوزی لینڈ کے بلے بازوں کے آگے کافی پسینہ بہانا پڑا۔ تصویر: اے پی

انگلینڈ کے تیزگیند بازجوفراآرچرنے نیوزی لینڈ کے خلاف پہلے ٹسٹ کے آخری روزخود پر نسلی تبصرہ کرنے کا الزام لگایا ہے۔ ان کا الزام ہے کہ میچ کے بعد ڈریسنگ روم لوٹتے وقت ایک کرکٹ مداح(درشک) نےانہیں نسلی گالیاں دیں۔ جوفرا آرچرنے ٹوئٹ کرکے اس بارے میں اطلاع دی۔ انہوں نے لکھا 'جب میں اپنی ٹیم کوبچانےکےلئے بلے بازی کررہا تھا تب نسلی بنیاد پرگالیاں سننے کوملیں، جس سے میں مایوس ہوں۔ اس ایک آدمی کو چھوڑکرکرکٹ ناظرین پورے ہفتے اچھے تھے۔ بارمی، آرمی ہمیشہ کی طرح کمال کی رہی'۔


انگلینڈ کے تیز گیند بازجوفراآرچرنے30 رنوں کی اننگ کھیلی اورانہوں نے سیم کرن کے ساتھ مل کر9 ویں وکٹ کےلئے نصف سنچری کی شراکت کی تھی، لیکن وہ انگلینڈ کوشکست سے نہیں بچا پائے۔ نیوزی لینڈ نےانگلینڈ کودوسری اننگ میں 197 رن پرسمیٹ کرمیچ اننگ اور65 رن سے جیت لیا۔ اس جیت سے نیوزی لینڈ نےدوٹسٹ کی سیریزمیں 0-1 کی سبقت حاصل کرلی۔


جوفرا آرچرکی شکایت کے بعد نیوزی لینڈ کرکٹ نے ردعمل ظاہرکیا ہے۔ اس میں کہا گیا ہے 'نیوزی لینڈ کرکٹ بورڈ انگلینڈ کےتیزگیند بازجوفراآرچرسے معافی مانگنے کےلئے رابطہ کرے گا۔ انہیں ماؤنٹ مونگانوئی میں کھیلےگئے پہلے ٹسٹ کے آخری دن ایک کرکٹ مداح نے نسلی بنیاد پرگالیاں دیں۔ حالانکہ میدان میں موجود سیکورٹی اہلکارملزم کوتلاش نہیں کر پائے، نیوزی لینڈ کرکٹ سی سی ٹی وی فوٹیج کی جانچ کرے گا اورقصوروارشخص کو تلاش کرنے کےلئےآگے کی کارروائی کرے گا'۔


بیان میں مزید کہا گیا ہے'نیوزی لینڈ کرکٹ اپنےکسی بھی میدان پرگالی گلوج یا اشتعال انگیز زبان کوبرداشت نہیں کرتا ہےاورایسے معاملوں کوپولیس کوبھیجا جائےگا، وہ کل جوفرا آرچرسے رابطہ کریں گے اوراس ناقابل قبول تجربہ کے لئے معافی مانگیں گے۔ ساتھ ہی وعدہ کریں گے کہ ہیملٹن میں ہونے والے آئندہ مقابلے کے دوران ایسا نہ ہو'۔
First published: Nov 25, 2019 04:44 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading