ہوم » نیوز » اسپورٹس

مین آف دی سیریزمنتخب ہونے کے بعد دھونی نے کہا 'کسی بھی آرڈرپربلے بازی کرنےکےلئے تیارہوں'۔

سابق کپتان دھونی نے تیسرے ون ڈے کے بعد کہا کہ میں نمبر4 سےنمبر6 تک کسی بھی آرڈرپرکھیل سکتا ہوں۔ ہمیں یہ دیکھنے کی ضرورت ہے کہ ٹیم کا توازن کس طرح برقراررکھا جا سکتا ہے۔

  • UNI
  • Last Updated: Jan 18, 2019 08:28 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
مین آف دی سیریزمنتخب ہونے کے بعد دھونی نے کہا 'کسی بھی آرڈرپربلے بازی کرنےکےلئے تیارہوں'۔
مہندر سنگھ دھونی: فائل فوٹو

میلبورن:  ہندوستان کی آسٹریلیا کے خلاف ون ڈے سیریز میں 1-2 کی تاریخی سیریزجیت میں مین آف دی سیریزبنے مہندرسنگھ دھونی نے جمعہ کوکہا کہ وہ کسی بھی آرڈرپربلے بازی کرنے کے لئے تیارہیں۔ دھونی نے تیسرے اورفیصلہ کن میچ میں ناقابل شکست 87 رنوں کی میچ فاتح اننگ کھیلی۔ 


مہندرسنگھ دھونی کو سیریزمیں مسلسل تین نصف سنچری بنانے کے لئے 'مین آف دی سیریز' کا ایوارڈ دیا گیا۔ وکٹ کیپربلے بازاورسابق کپتان دھونی نے تیسرے ون ڈے کے بعد کہا کہ میں نمبر4 سےلےکرنمبر6 تک کسی بھی آرڈرپرکھیل سکتا ہوں۔ ہمیں یہ دیکھنے کی ضرورت ہے کہ ٹیم کا توازن کس طرح برقراررکھا جا سکتا ہے۔


سابق ہندوستانی کپتان دھونی نے کہا کہ میرے لئے سب سے اہم بات یہ ہےکہ مجھے وہاں بلے بازی کرنی ہے، جہاں ٹیم کومیری ضرورت ہے۔ میں چھٹےنمبرپربلے بازی کرنے پربھی خوش ہوں۔ تیسرے میچ میں کیدارجادھو کے ساتھ سنچری شراکت کے لئے دھونی نے کہا کہ یہ سست وکٹ تھا اورہٹنگ آسان نہیں تھی۔ میچ کو آخرتک لے جانا ضروری تھا۔ جب گیند باز اچھا کررہے ہوں توغیرضروری خطرہ لینے کی ضرورت نہیں تھی۔ کیدارجادھو نے شاندار اننگ اورکچھ بہترین شاٹ کھیلے۔



واضح رہے کہ میلبورن میں کھیلے گئے فیصلہ کن تیسرے ونڈے میچ میں مہندرسنگھ دھونی نے انتہائی ذمہ دارانہ اننگ کھیلی۔ انہوں نے ناٹ آوٹ 87 رنوں کی اننگ کھیلی۔ اس سے ٹیم انڈیا کو جیت حاصل ہوئی۔ اس سے قبل وراٹ کوہلی کے ساتھ مل کردھونی نے اننگ کوآگے بڑھایا تھا، لیکن کوہلی کے آوٹ ہونے کے بعد ٹیم انڈیا مشکل میں آگئی تھی۔ تاہم دھونی کا فارم جاری رہا اوران کا بہترین ساتھ کیدارجادھو نے دیااورتیزاننگ کھیل کر61 رن بناڈالے۔ اس طرح سے ٹیم انڈیا نے آج تاریخ رقم کردی۔
First published: Jan 18, 2019 08:28 PM IST