உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Tokyo Olympics : تاریخ رقم کرنے کے بعد میرابائی چانو نے کہا : جیسے کوئی خواب سچ ہوگیا ، ملک کے نام وقف کیا میڈل

    Tokyo Olympics : تاریخ رقم کرنے کے بعد میرابائی چانو نے کہا : جیسے کوئی خواب سچ ہوگیا ۔ (PC-AP)

    Tokyo Olympics : تاریخ رقم کرنے کے بعد میرابائی چانو نے کہا : جیسے کوئی خواب سچ ہوگیا ۔ (PC-AP)

    میرابائی چانو (Mirabai Chanu) نے ٹوکیو اولمپک میں سلور میڈیل جیتا ہے اور ویٹ لفٹنگ میں اولمپک میڈل جیتنے والی دوسری ہندوستانی خاتون بن گئی ہیں ۔ ان سے پہلے 2000 میں کرنم ملیشوری نے سڈنی اولمپک مین کانسے کا میڈل جیتا تھا ۔ میرا بائی نے اپنے اس میڈل کو قوم کے نام وقف کیا ہے ۔

    • Share this:
      نئی دہلی : ملک کے کروڑوں کھیل مداحوں کے چہرے پر خوشی لانے والی ویٹ لفٹر میرا بائی چانو نے ٹوکیو اولمپک میں سلور میڈل جیتنے کے بعد کہا کہ وہ اس خوشی کو الفاظ میں بیان نہیں کرسکتی ہیں ۔ ویٹ لفٹنگ میں اولمپک میڈل کا ہندوستان کو دو دہائیوں سے انتظار تھا جو ہفتہ کو میرا بائی نے اس وقت ختم کردیا جب 49 کلو گرام کے زمرہ میں انہوں نے سلور میڈل جیتا ۔ میرا بائی چانو ویٹ لفٹنگ میں اولمپک میڈل جیتنے والی کرنم ملیشوری کے بعد ملک کی دوسری خاتون کھلاڑی بن گئی ہیں ۔

      اولمپک میں ویٹ لفٹنگ میں سلور میڈل جیتنے والی پہلی ہندوستانی بنی میرا بھائی نے نیوز 18 لوکمت کے ساتھ ایک خاص انٹرویو میں کہا کہ میں الفاظ میں بیاں نہیں کرسکتی کہ کتنی خوشی محسوس کررہی ہوں ، مجھے بہت فخر محسوس ہورہا ہے ، یہ ویٹ لفٹنگ میں ہمارا دوسرا میڈل ہے ، میں یونین ، میرے کوچ ، کبنہ اور سبھی مداحوں کا شکریہ ادا کرنا چاہتی ہوں ۔

      منی پور کی میرا بائی نے مزید کہا کہ ان کا ہدف ٹوکیو کھیلوں میں میڈل جیتا تھا اور اس لئے انہوں نے اپنے خواب کو شرمندہ تعبیر کرنے کیلئے کافی محنت کی ۔ انہوں نے کہا کہ میں نے اس کیلئے کافی محنت کی ، بہت کچھ قربان بھی کیا ، ٹوکیو اولمپک میں میڈل جیتا ہی میرا ہدف تھا ، یہ میرے خواب کے سچ ہونے جیسا ہے ۔ میرا بائی کو میڈل جیتنے پر صدر جمہوریہ رام ناتھ کووند ، وزیر اعظم مودی سمیت سرکردہ شخصیات نے مبارکباد دی ہے ۔



      میرا بائی چانو نے نبھایا وعدہ

      واضح رہے کہ میرا بائی چانو نے ٹوکیو اولمپک میں تمغہ جیتنے کا وعدہ کیا تھا۔ میرا بائی چانو نے ایک انٹرویو میں کہا تھا کہ ریو اولمپک میں ان کی خراب کارکردگی وہ بھول چکی ہیں۔ میرا بائی نے بتایا تھا کہ وہ اسٹیڈیم سے اپنے کمرے تک روتے ہوئے گئی تھیں، لیکن ٹوکیو اولمپک کے لئے میرا بائی نے جم کر محنت کی اور اس کا نتیجہ سب کے سامنے ہے۔

      میرا بائی اولمپک میں ہندوستان کے لئے سب سے بہترین کارکردگی کرنے والی ویٹ لیفٹر بن گئی ہیں۔ میرا بائی کی اس کامیابی کو پورا ملک سلام کر رہا ہے۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: