ہوم » نیوز » اسپورٹس

پاکستان کے ’کھیل’ میں کودا ایک اور کھلاڑی، کہا- فکسنگ کرنے والا اکیلا نہیں

پاکستان کے تیز گیند باز محمد آصف (Mohammad Asif ) سال 2010 کے انگلینڈ دورے پر اسپاٹ فکسنگ کے الزامات کے سبب برطانیہ کے جیل میں بھی رہے۔

  • Share this:
پاکستان کے ’کھیل’ میں کودا ایک اور کھلاڑی، کہا- فکسنگ کرنے والا اکیلا نہیں
پاکستان کے سابق تیز گیند باز محمد آصف نے بھی دوسرا موقع مانگا ہے۔

جہاں پوری دنیا میں کورونا وائرس (Coronavirus) کےسبب کرکٹ کے میچ نہیں ہو رہے ہیں، وہیں ان دنوں پاکستان میں ایک الگ ہی کھیل چل رہا ہے۔ عمر اکمل پر پابندی، وسیم اکرم پر سوال، شعیب اختر پر جرمانہ، سلیم ملک کا دوسرا موقع مانگنا ان دنوں پاکستان میں تمام موضوعات سرخیوں میں ہیں۔ پاکستان کے اس کھیل میں ایک اور کھلاڑی آچکا ہے۔ اسپاٹ فکسنگ کے سبب جیل میں رہ چکے پاکستان کے سابق تیز گیند باز محمد آصف نے بھی دوسرا موقع مانگا ہے۔ محمد آصف (Mohammad Asif) نےکہا ہےکہ اسپاٹ فکسنگ میں شامل ہونے والے وہ نہ تو پہلےکھلاڑی ہیں اور نہ ہی آخری، لہٰذا کرکٹ بورڈ کو ان کے ساتھ بہتر برتاو کرکے دوسروں کی طرح مجھے بھی ایک موقع اور دیا جانا چاہئے تھا۔


برطانیہ کی جیل میں بھی رہے تھے


محمد آصف پر پاکستان ٹیم کے 2010 کے انگلینڈ دورے پر اسپاٹ فکسنگ کے الزامات کے سبب 7 سال کی پابندی عائد کی گئی تھی۔ وہ برطانیہ کے جیل میں بھی رہے۔ محمد آصف نے’کرک انفو’ سےکہا کہ ہرکوئی غلطی کرتا ہے اور انہوں نے بھی کی۔ ان سے پہلے اور بعد میں بھی لوگوں نے فکسنگ کی، لیکن ان سے پہلے کرنے والے پی سی بی کے ساتھ کام کر رہے ہیں اور ان کے بعد والے ابھی بھی کھیل رہےہیں۔ انہوں نےکہا کہ ہر کسی کو دوسرا موقع دیا گیا، لیکن ان کے جیسے کچھ کو وہ نہیں ملا۔ پی سی بی نے مجھے بچانےکی کبھی کوشش نہیں کی۔ محمد آصف نےکہا کہ وہ ایسے گیند باز تھے، جسے پوری دنیا میں احترام حاصل تھا۔


پاکستان کے سابق تیز گیند باز محمد آصف نے بھی دوسرا موقع مانگا ہے۔

محمد آصف سے پہلے سابق کپتان سلیم ملک نے میچ فکسنگ کے سبب ان پر عائد تاحیات پابندی ہٹانے کی گزارش کی تھی تاکہ وہ کوچنگ کا اپنا خواب پورا کرسکیں۔ سلیم ملک کو 2000 میں میچ فکسنگ کا قصوروار پایا گیا تھا، جس کے بعد ان پر تاحیات پابندی عائد کردی گئی تھی۔ وسیم اکرم کی طرف اشارہ کرتے ہوئے سلیم ملک نے کہا تھا کہ بدعنوانی کے قصور وار دیگر کھلاڑیوں کو کھیل میں واپسی کی اجازت دی گئی، لیکن انہیں نہیں۔ یوں تو پاکستان کے بیشتر سابق کھلاڑیوں نے سلیم ملک کی مخالفت کی ہے، لیکن سلیم ملک کے ہاں میں ہاں ملاتے ہوئے پاکستان کے سابق کپتان انضمام الحق نےکہا کہ مجھےلگتا ہےکہ سلیم ملک کو دوسرا موقع دینا چاہئے، تاکہ وہ ملک کے لئےکچھ کرسکیں وہ نوجوان بلے بازوں کے لئے اچھی کوچنگ کرسکتے ہیں۔
First published: May 06, 2020 07:34 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading