உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Nikhat Zareen: ورلڈ باکسنگ چیمپئن بننے کے بعد اولمپک اگلا ہدف! ’بڑھے چلو منزل کی طرف‘

    Youtube Video

    نکہت زرین (Nikhat Zareen) نے کہا کہ اولمپکس میرا حتمی مقصد ہے لیکن وہاں کامیابی حاصل کرنے کے لیے مجھے بہت زیادہ محنت کرنی پڑے گی کیونکہ میں جانتی ہوں کہ اولمپکس کتنا بڑا مقابلہ ہے۔ میں نے اب تک جتنی محنت کی ہے اس سے دوگنی کوشش کرنی ہے۔

    • Share this:
      ورلڈ باکسنگ چیمپیئن شپ (the World Boxing Championship) میں اپنے کارناموں سے تازہ دم ہوکر نکہت زرین (Nikhat Zareen) نے اب مضبوطی سے پیرس اولمپکس 2024 (Paris Olympics) کے چوتھائی اسٹرواگنزا ایڈیشن کے دوران ٹاپ پوڈیم فنش کے ساتھ برابری کرنے والوں میں پہلی پوزیشن حاصل کر لی ہے۔

      زرین نے 19 مئی کو استنبول میں خواتین کی عالمی چیمپئن شپ کے فائنل میں تھائی لینڈ کی جیتپونگ جوٹامس (Jitpong Jutamas) کو پانچ صفر سے شکست دے کر فلائی ویٹ (52 کلوگرام) ڈویژن میں طلائی تمغہ حاصل کیا، اس طرح وہ عالمی چیمپئن بننے والی پانچویں اور پہلی مسلمان ہندوستانی باکسر بن گئیں۔

      نکہت زرین نے کہا کہ ’میں خوش ہوں کہ میں نے ملک کے لیے عالمی چیمپیئن شپ میں سونے کا تمغہ جیتا ہے اور مستقبل میں بھی میں مزید محنت کرنا چاہوں گی اور ہندوستان کے لیے تمغے جیتتی رہوں گی۔ نکہت سال 2019 کے ایشین چیمپئن شپ میں کانسی کا تمغہ جیتی تھی۔ اسپورٹس اتھارٹی آف انڈیا اور نیشنل فیڈریشن (BFI) کی طرف سے مشترکہ طور پر منعقدہ ایک پروقار تقریب کے دوران انھوں نے نئے عزائم کا بھی اظہار کیا۔

      نکہت زرین (Nikhat Zareen) نے کہا کہ اولمپکس میرا حتمی مقصد ہے لیکن وہاں کامیابی حاصل کرنے کے لیے مجھے بہت زیادہ محنت کرنی پڑے گی کیونکہ میں جانتی ہوں کہ اولمپکس کتنا بڑا مقابلہ ہے۔ میں نے اب تک جتنی محنت کی ہے اس سے دوگنی کوشش کرنی ہے۔

      "اب مجھ پر زیادہ ذمہ داری ہے۔"

      2011 میں ترکی میں خواتین کی جونیئر اور یوتھ ورلڈ باکسنگ چیمپئن شپ میں فلائی ویٹ ڈویژن میں گولڈ میڈل جیتنے کے بعد سے، زرین کے لیے یہ ایک مشکل سفر رہا ہے۔ سینئر ورلڈ چیمپیئن شپ کے 2019 کے ایڈیشن میں، میری کوم کو زرین پر ان کی مسلسل کارکردگی کی وجہ سے ترجیح دی گئی تھی حالانکہ بعد میں BFI سے منصفانہ ٹرائل کا مطالبہ کیا گیا تھا۔ مارک کوم نے اپنا آٹھواں عالمی تمغہ، کانسی کا تمغہ اپنے نام کیا۔

      نکہت زرین نے کہا کہ سفر بہت اچھا رہا ہے۔ یہ آسان نہیں تھا کیونکہ میں نے بہت سے اتار چڑھاؤ دیکھے ہیں لیکن اس نے مجھے اس مقام پر کھڑا ہونے کی ترغیب دی جہاں میں آج ہوں۔ اس تقریب کے دوران بی ایف آئی کے صدر اجے سنگھ نے زرین کو اپنے مستقبل کے اہداف کی یاد دلائی۔

      مزید پڑھیں: شیعہ مذہبی رہنما کلب جواد نے کہا- اعظم خان اور جتیندر تیاگی مل کر بنائیں گے نئی پارٹی

      انہوں نے کہا میں نکہت زرین سے خصوصی وابستگی چاہتا ہوں۔ آج وہ یہاں عالمی چیمپئن کے طور پر کھڑی ہے۔ اگلی بار انہیں یہاں اولمپک چیمپئن کے طور پر کھڑا ہونا چاہئے۔

      مزید پڑھیں: Gyanvapi Mosque Case: گیان واپی مسجد معاملے میں اب 26 مئی کو ہوگی اگلی سماعت

      اس تقریب میں وزیر کھیل انوراگ ٹھاکر نے بھی شرکت کی، جنہوں نے ہندوستانی باکسر کے شاندار شو کی تعریف کی، اور SAI کے ڈائریکٹر جنرل سندیپ پردھان سمیت دیگر نے بھی شرکت کی۔
      Published by:Mohammad Rahman Pasha
      First published: