உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    انگلینڈ کے گیند باز نے رقم کی تاریخ، آسٹریلیا کے خلاف ایک میچ میں حاصل کئے تھے 19 وکٹ

    انگلینڈ کے گیند باز جم لیکر نے تاریخ رقم کرتے ہوئے آسٹریلیا کے خلاف ایک میچ میں 19 وکٹ حاصل کئے تھے۔

    انگلینڈ کے گیند باز جم لیکر نے تاریخ رقم کرتے ہوئے آسٹریلیا کے خلاف ایک میچ میں 19 وکٹ حاصل کئے تھے۔

    آف اسپنر جم لیکر (Jim Laker) نے آسٹریلیا کی پہلی اننگ میں 37 رن دے کر 9 وکٹ حاصل کرکے تاریخ رقم کی تھی۔ یہ میچ 26 جولائی سے شروع ہوا تھا اور 31 جولائی کو جم لیکر نے دوسری دوسری اننگ کے سبھی 10 وکٹ اپنے نام کئے۔ انگلینڈ نے اس میچ میں اننگ اور 170 رنوں سے جیت حاصل کی تھی۔

    • Share this:
      نئی دہلی: کرکٹ تاریخ میں 31 جولائی کا دن انگلینڈ ٹیم اور اس کے عظیم گیند باز رہے جم لیکر (Jim Laker) کے لئے بے حد خاص ہے۔ جم لیکر نے اسی دن سال 1956 میں تاریخ رقم کرتے ہوئے ایک ٹسٹ میچ میں 19 وکٹ حاصل کئے تھے۔ اولڈ ٹریفرڈ میں جم لیکر نے آسٹریلیا کے خلاف سیریز کے چوتھے ٹسٹ میچ میں یہ حصولیابی حاصل کی تھی۔ جم لیکر نے مینچسٹر میں 26 جولائی سے شروع ہوئے اس ٹسٹ میچ میں انگلینڈ کی جیت میں اہم کردار نبھایا۔ انہوں نے 31 جولائی کو میچ میں اپنا 19 واں وکٹ حاصل کیا، جس میں دوسری اننگ کے سبھی 10 وکٹ شامل تھے۔

      آف اسپنر جم لیکر (Jim Laker) نے آسٹریلیا کی پہلی اننگ میں 37 رن دے کر 9 وکٹ حاصل کئے جبکہ دوسری اننگ میں 53 رن دے کر سبھی 10 وکٹ اپنے نام کئے۔
      آف اسپنر جم لیکر (Jim Laker) نے آسٹریلیا کی پہلی اننگ میں 37 رن دے کر 9 وکٹ حاصل کئے جبکہ دوسری اننگ میں 53 رن دے کر سبھی 10 وکٹ اپنے نام کئے۔


      آف اسپنر جم لیکر (Jim Laker) نے آسٹریلیا کی پہلی اننگ میں 37 رن دے کر 9 وکٹ حاصل کئے جبکہ دوسری اننگ میں 53 رن دے کر سبھی 10 وکٹ اپنے نام کئے۔ انگلینڈ نے پیٹر مے کی کپتانی میں کھیلتے ہوئے اپنی پہلی اننگ میں 459 رن بنائے۔ انگلینڈ کے سلامی بلے باز پیٹر رچرڈس نے 104 اور ڈیوڈ شیپرڈ نے 113 رنوں کی شاندار اننگ کھیلیں۔ رچرڈسن نے کولن کاورڈے (80) کے ساتھ مل کر 174 رنوں کی اوپننگ شراکت بھی کی تھی۔ آسٹریلیا کے لئے ایان جانسن نے 4 اور رچی بینا نے دو وکٹ حاصل کئے۔

      اس کے بعد آسٹریلیائی ٹیم کی پہلی اننگ صرف 84 رنوں پر سمٹ گئی جب جم لیکر نے اس کے بلے بازوں کو ٹکنے کا ہی موقع نہیں دیا۔ میزبان ٹیم کے سلامی بلے باز کولن میکڈونالڈ اور جم بُرکے ہی دہائی کے اعدادوشمار تک پہنچ سکے۔ فالو آن کرتے ہوئے بھی آسٹریلیائی ٹیم کا حال بہت خراب رہا اور وہ دوسری اننگ میں 205 رنوں پر ہی سمٹ گئی۔ انگلینڈ نے اس طرح میچ کو اننگ اور 170 رنوں سے جیتا۔ جب آخری کھلاڑی لین میڈاکس ایل بی ڈبلیو آوٹ ہوئے تو جم لیکر خوشی سے جھوم اٹھے، جنہوں نے دوسری اننگ میں سبھی 10 وکٹ حاصل کئے تھے۔

       جم لیکر نے اپنے کیریئر میں 46 ٹسٹ میچ کھیلے اور 63 اننگوں میں کل 193 وکٹ حاصل کئے۔

      جم لیکر نے اپنے کیریئر میں 46 ٹسٹ میچ کھیلے اور 63 اننگوں میں کل 193 وکٹ حاصل کئے۔


      جم لیکر نے اپنے کیریئر میں 46 ٹسٹ میچ کھیلے اور 63 اننگوں میں کل 193 وکٹ حاصل کئے۔ اس کے علاوہ انہوں نے دو نصف سنچریوں کی مدد سے کل 676 رن بھی بنائے۔ انہوں نے فرسٹ کلاس کرکٹ میں کل 1944 وکٹ حاصل کئے اور دو سنچری، 18 نصف سنچری کی بدولت 7304 رن بھی بنائے۔ سال 1986 میں 64 سال کی عمر میں لندن میں ان کا انتقال ہوگیا تھا۔
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: