ہوم » نیوز » اسپورٹس

پاکستان کے سابق عظیم تیز گیند باز کے والد کا انتقال، آسٹریلیا سے واپس لوٹے وقار یونس

پاکستان کے سابق تیز گیند باز وقار یونس اس دکھ کی گھڑی میں اہل خانہ کے ساتھ نہیں تھے۔ وہ انگلینڈ دورے کے بعد سیدھے آسٹریلیا چلے گئے تھے۔

  • Share this:
پاکستان کے سابق عظیم تیز گیند باز کے والد کا انتقال، آسٹریلیا سے واپس لوٹے وقار یونس
پاکستان کے سابق عظیم تیز گیند باز کے والد کا انتقال، آسٹریلیا سے واپس لوٹے وقار یونس

د پاکستان (Pakistan) کے سابق تیز گیند باز اور ٹیم کے موجودہ گیند بازی کوچ وقار یونس (waqar Younus) کے والد محمد یونس کا انتقال ہوگیا ہے۔ دو دن پہلے ان کے والد کو لاہور کے ایک اسپتال میں سنگین حالت میں داخل کرایا گیا تھا۔ وقار یونس کی اہلیہ نے بتایا کہ کورونا وائرس (Coronavirus) کے اس وبا کے وقت ان کے اہل خانہ کے لئے یہ مشکل گھڑی ہے۔ وقار یونس اس دکھ کی گھڑی میں اہل خانہ کے ساتھ نہیں تھے۔ وہ انگلینڈ دورے کے بعد سیدھے آسٹریلیا (Australia) چلے گئے تھے۔ پاکستان کرکٹ بورڈ (PCB) نے اس حادثہ پرافسوس کا اظہار کیا ہے۔


آسٹریلیا میں تھے وقاریونس


پاکستانی اخبار ڈان کے مطابق وقار یونس اتوار کی دیر رات لاہور پہنچے۔ واضح رہے کہ انگلینڈ کا دورہ ختم ہونے کے بعد دو ستمبر کو وقار یونس سیدھے سڈنی چلے گئے تھے۔ وہاں ضوابط کے مطابق انہیں 9 دنوں کے لئے کوارنٹائن کردیا گیا تھا۔ وقار یونس سڈنی میں ہی رہتے ہیں۔ والد کی موت کے بعد آسٹریلیا کے افسران نے انہیں کوارنٹائن سینٹر سے سیدھے پاکستان جانے کی اجازت دے دی ہے۔




پاکستان کے بہترین گیند باز

وقار یونس پاکستان کی طرف سے ٹسٹ کرکٹ میں سب سے زیادہ وکٹ لینے والے دوسرے گیند باز ہیں۔ وسیم اکرم کے 414 وکٹ ہیں۔ وقار یونس نے 373 وکٹ لئے۔ جبکہ ونڈے میں وقار یونس سب سے زیادہ وکٹ لینے والے دنیا کے تیسرے گیند باز ہیں۔ یہاں انہوں نے 262 میچوں میں 416 وکٹ لئے ہیں۔ اپنے دور میں وقار یونس ریورس سوئنگ کے بادشاہ تھے۔ پہلی بار انہیں سال 2006 میں پاکستانی ٹیم کا کوچ بنایا گیا تھا۔ سال 2014 سے وقار یونس مسلسل پاکستانی ٹیم سے جڑے ہیں۔
Published by: Nisar Ahmad
First published: Sep 14, 2020 04:43 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading