உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    وزیر اعظم مودی نے ریٹائرمنٹ لے چکے سریش رینا کے نام لکھا خط، کہا- ریٹائرمنٹ لینے سے متعلق کہی یہ بڑی بات

    وزیر اعظم مودی نے ریٹائرمنٹ لے چکے سریش رینا کے نام لکھا خط، کہا- ریٹائرمنٹ لینے کے لئے بہت نوجوان ہیں آپ

    وزیر اعظم مودی نے ریٹائرمنٹ لے چکے سریش رینا کے نام لکھا خط، کہا- ریٹائرمنٹ لینے کے لئے بہت نوجوان ہیں آپ

    سریش رینا (Suresh Raina) نے 15 اگست کو مہندر سنگھ دھونی (Mahendra Singh Dhoni) کے ریٹائرمنٹ کے اعلان کے 15 منٹ بعد ریٹائرمنٹ لے لیا تھا۔ حالانکہ وہ چنئی سپرکنگس (Chennai Super Kings) کی طرف سے کھیلنا جاری رکھیں گے۔

    • Share this:
      نئی دہلی: سابق ہندوستانی آل راونڈر اور شاندار فیلڈر مانے جانے والے سریش رینا (Suresh Raina) نے بھی 15 اگست کو بین الاقوامی کرکٹ کو الوداع کہہ دیا تھا۔ ہندوستانی وزیر اعظم نریندر مودی (Narendra Modi) نے سریش رینا کو خط لکھ کر ہندوستانی کرکٹ میں تعاون دینے کے لئے شکریہ کہا، ساتھ ہی انہیں بین الاقوامی کرکٹر کا بہترین فیلڈر بھی بتایا۔ خط میں وزیر اعظم نریندر مودی نے سریش رینا کو نئی اننگ کے لئے نیک خواہشات پیش کی۔

       




      سریش رینا نے سوشل میڈیا پر کہا شکریہ

      سریش رینا نے انسٹا گرام پر خود یہ خط شیئر کیا اور لکھا، ’جب ہم کھیلتے ہیں تب اپنا خون پسینہ بہاتے ہیں۔ مداح کے پیار سے بڑھ کر اور کوئی تعریف نہیں ہوتی۔ یہ تعریف اور خاص بن جاتی ہے جب یہ ملک کے وزیر اعظم کی طرف سے ملے۔ شکریہ نریندر مودی جی آپ کے الفاظ اور نیک خواہشات کے لئے۔ جے ہند’۔

       




      وزیر اعظم نریندر مودی کا خط

      عزیز سریش،

      15 اگست کے دن آپ نے وہ فیصلہ کیا، جو شاید آپ کی زندگی کا سب سے مشکل فیصلہ تھا۔ میں آپ کے لئے ریٹائرمنٹ لفظ کا استعمال نہیں کروں گا کیونکہ آپ کافی نوجوان اور جوش سے لبریز ہیں۔ کرکٹ فیلڈ کے بعد آپ اپنی اگلی اننگ کے لئے تیاری کر رہے ہیں۔ آپ نے ہمیشہ کرکٹ کو جیا ہے۔ آپ کے سفر کی شروعات مراد نگر میں کافی جلدی ہوگئی تھی اور پھر آپ اسی خواب کو لے کر لکھنو پہنچے۔ تب سے کیا شاندار سفر رہا ہے آپ کا، جہاں آپ نے تینوں فارمیٹ میں ملک کی نمائندگی کی۔ آپ کو صرف ایک بلے باز کے طور پر ہی یاد نہیں کیا جائے گا بلکہ ایسے گیند باز کے طور پر بھی یاد کیا جائے گا، جو ہمیشہ کپتان کے کام آیا، جب بھی ٹیم کو ضرورت پڑی۔ آپ کی فیلڈنگ اور لوگوں کو ترغیب دینے کی ہے۔ بین الاقوامی کرکٹ کے کئی شاندار کیچ آپ کے نام ہیں۔ آپ نے اپنی فیلڈنگ سے کتنے رن روکے یہ شمار کرنے کے لئے کئی دن چاہئے۔

      عالمی کپ 2011 کے دوران آپ کی کارکردگی کو ملک کبھی نہیں بھولے گا، میں نے احمد آباد کے موٹیرا اسٹیڈیم میں آپ کے کھیل کو لائیو دیکھا تھا۔ اس وقت ٹیم انڈیا آسٹریلیا کے خلاف کوارٹر فائنل میچ کھیل رہی تھی۔ آپ کی اننگ نے ہندوستانی ٹیم کی جیت میں اہم تعاون دیا تھا۔ میں یقین کے ساتھ کہہ سکتا ہوں کہ مداح آپ کے کور ڈرائیو شاٹ کو ضرور مس کریں گے۔ میں خود کو خوش نصیب مانتا ہوں کہ اس میچ کو لائیو دیکھا تھا۔ کھلاڑیوں کو نہ صرف میدان میں ان کی کارکردگی کے لئے یاد کیا جاتا ہے، بلکہ گراونڈ کےباہر کئے گئے برتاو کی تعریف کی جاتی ہے۔ آپ کے جدوجہد کرنے کی خواہش کئی نوجوانوں کو ترغیب دیتی ہے۔ اپنے کیریئر کے دوران کئی بار آپ کو مایوسی ہاتھ لگی، جس میں چوٹ سے گزرنا شامل تھا، لیکن ہر بار آپ نے چیلنجز کو پار پا لیا، یہ آپ کے پختہ ہونے کا ثبوت ہے۔

       
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: