உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    ڈیف اولمپکس میں اب تک کی بہترین کارکردگی، PM Modi کرنگےہندوستانی دستے کی میزبانی

    وزیر اعظم نریندر مودی (Prime Minister Narendra Modi)

    وزیر اعظم نریندر مودی (Prime Minister Narendra Modi)

    پی ایم مودی نے ٹویٹ کیا کہ حال ہی میں ختم ہونے والے ڈیف اولمپکس میں اب تک کی بہترین کارکردگی کے لیے ہندوستانی دستے کو مبارکباد! ہمارے دستے کا ہر کھلاڑی ہمارے ساتھی شہریوں کے لیے ایک تحریک ہے۔ میں 21 تاریخ کی صبح اپنی رہائش گاہ پر پورے دستے کی میزبانی کروں گا۔

    • Share this:
      وزیر اعظم نریندر مودی (Prime Minister Narendra Modi) نے منگل کو ہندوستانی دستے کو حال ہی میں ختم ہونے والے ڈیف اولمپکس (Deaflympics) میں اس کی اب تک کی بہترین کارکردگی کے لیے مبارکباد دی اور کہا کہ وہ 21 مئی 2022 کو اپنی رہائش گاہ پر ان کی میزبانی کریں گے۔ ڈو سل، برازیل نے 8 طلائی، ایک چاندی اور 8 کانسی کے تمغے جیتے۔

      پی ایم مودی نے ٹویٹ کیا کہ حال ہی میں ختم ہونے والے ڈیف اولمپکس میں اب تک کی بہترین کارکردگی کے لیے ہندوستانی دستے کو مبارکباد! ہمارے دستے کا ہر کھلاڑی ہمارے ساتھی شہریوں کے لیے ایک تحریک ہے۔ میں 21 تاریخ کی صبح اپنی رہائش گاہ پر پورے دستے کی میزبانی کروں گا۔

      یہ بات قابل ذکر ہے کہ ہندوستان نے تین طلائی اور دو کانسی کے تمغوں کے ساتھ دوسرے مقام پر رہ کر برازیل کے کاکسیاس ڈو سل میں 24 ویں ڈیف اولمپکس میں اپنی شوٹنگ اسائنمنٹ کو سمیٹ لیا۔
      صرف یوکرین 10 مضبوط ہندوستانی دستے سے آگے رہا، جس میں چھ سونے اور مجموعی طور پر 12 تمغے شامل تھے۔ ڈیف اولمپکس میں ملک کی اب تک کی بہترین کارکردگی کو یقینی بنانے میں ہندوستانی نشانے بازوں کی یہ ایک قابل ستائش کارکردگی تھی۔

      یہ بھی پڑھیں:
      OIC کے بیان پر ہندوستان کا شدید ردعمل،کہا-’فرقہ وارانہ ایجنڈہ‘ نہ چلائیں

      ہندوستان نے تین طلائی اور دو کانسی کے تمغوں کے ساتھ دوسرے مقام پر رہ کر برازیل کے کاکسیاس ڈو سل میں 24 ویں ڈیف اولمپکس میں اپنی شوٹنگ اسائنمنٹ کو مکمل کیا۔

      یہ بھی پڑھیں:

      مسلم دانشوروں کی اپیل-مسلم بھائی بڑادل کرکے ہندوبھائیوں کوسونپ دیں Gyanvapi مسجد

      ہندوستان اس وقت سات سونے ایک چاندی اور چار کانسی کے تمغوں کے ساتھ تمغوں کی میز پر آٹھویں نمبر پر ہے۔
      Published by:Mohammad Rahman Pasha
      First published: