உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    ہندوستانی اسپنر نے10رن دے کر 8 وکٹ لیے،2اوور میں پوری کی ہیٹرک، لیکن ٹیم انڈیا سے دور

    شہباز ندیم نے دس اووروں میں لیے آٹھ وکٹ۔ (تصویر: اے ایف پی)

    شہباز ندیم نے دس اووروں میں لیے آٹھ وکٹ۔ (تصویر: اے ایف پی)

    اس سے پہلے لسٹ اے کرکٹ کا بہترین مظاہرہ ہندوستان کے ہی بائیں ہاتھ کے اسپنر راہل سانگھوی کے نام تھا۔ انہوں نے 1997 میں دلی کی جانب سے کھیلتے ہوئے ہماچل کے خلاف بہترین مظاہرہ کیا تھا۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Jharkhand | Himachal Pradesh | Rajasthan
    • Share this:
      نئی دہلی: شہباز ندیم (Shahbaz Nadeem) نے گھریلو کرکٹ میں بہترین مظاہرہ کیا ہے۔ وہ فرسٹ کلاس کرکٹ میں 450 سے زیادہ وکٹ لے چکے ہیںَ اس 33 سال کے بائیں ہاتھ اسپنر کے لئے آج کا دن بے حد خاص ہے۔ انہوں نے 20 ستمبر 2018 کو وجئے ہزارے ونڈے ٹورنامنٹ کے ایک مقابلے میں جھارکھنڈ کی جانب سے کھیلتے ہوئے راجستھان کے خلاف 10 رن دے کر 8 وکٹ لیے تھے۔ یہ لسٹ اے کرکٹ میں دنیا کے کسی بھی گیندباز کا سب سے بہترین مظاہرہ ہے۔ انہوں نے 2 اوور میں ہیٹرک بھی پوری کی تھی۔ حالانکہ انہیں اب تک انڈین ٹیم کی جانب سے ونڈے کھیلنے کا موقع نہیں ملا ہے۔ وہ 2 ٹسٹ میچ میں ضرور اتر چکے ہیں۔ اس وقت جھارکھنڈ کی کمان ایشان کشن کے پاس تھی۔

      20 ستمبر 2018 کو چنئی میں کھیلے گئے ایک مقابلے میں راجستھان نے ٹاس جیت کر بلے بازی کرنے کا فیصلہ کیا۔ ٹیم کی شروعات کافی خراب رہی تھی۔ ایک وقت پر اسکور ایک وکٹ پر 41 رن تھا۔ اس کے بعد شہباز ندیم گیندبازی کرنے آئے اور پوری راجستھان ٹیم کو بکھیر کر رکھ دیا۔ پوری ٹیم 28.3 اوور میں 73 رن پر ہی آل آؤٹ ہوگئی۔ 8 کھلاڑی دوہرے نمبر کو بھی نہیں چھوسکے تھے۔

      یہ بھی پڑھیں:
      آف اسپنر عالمی کپ میں بلے باز کے طور پر اترا، ٹیم کو عالمی چمپئن بنایا، یہاں جانیں ریکارڈ

      یہ بھی پڑھیں:
      دو سال سےٹسٹ ٹیم سے باہربنگلہ دیشی گیند باز نےکردیا ریٹائرمنٹ کا اعلان، بڑی وجہ آئی سامنے

      2 اوور میں ہیٹرک
      شہباز ندیم نے 2 اوور میں ہیٹرک پوری کی۔ انہوں نے 20ویں اوور کی پانچویں گیند پر مہی پال لومرور کو بولڈ کیا۔ پھر آخری گیند پر چیتن بشٹ کو بھی واپس بھیج دیا۔ اگلے اوور کی پہلی ہی گیند پر انہوں نے تجندر سنگھ کو ایل بی ڈبلیو کر کے اپنی ہیٹرک پوری کی تھی۔ انہوں نے 10 اوور میں 4 میڈن ڈالے تھے۔ 10 رن دے کر 8 وکٹ لیے تھے۔ اس سے پہلے لسٹ اے کرکٹ کا بہترین مظاہرہ ہندوستان کے ہی بائیں ہاتھ کے اسپنر راہل سانگھوی کے نام تھا۔ انہوں نے 1997 میں دلی کی جانب سے کھیلتے ہوئے ہماچل کے خلاف بہترین مظاہرہ کیا تھا۔ انہوں نے 9.5 اوور میں 15 رن دے کر 8 وکٹ لیے تھے۔
      Published by:Shaik Khaleel Farhaad
      First published: