உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    ای سی بی اور نیوزی لینڈ بورڈ پر بھڑکے شاہد آفریدی، کہا- سمجھدار ممالک کو ہندوستان کے پیچھے نہیں چلنا چاہئے

    ای سی بی اور نیوزی لینڈ بورڈ پر بھڑکے شاہد آفریدی، کہا- سمجھدار ممالک کو ہندوستان کے پیچھے نہیں چلنا چاہئے

    ای سی بی اور نیوزی لینڈ بورڈ پر بھڑکے شاہد آفریدی، کہا- سمجھدار ممالک کو ہندوستان کے پیچھے نہیں چلنا چاہئے

    شاہد آفریدی نے انکشاف کیا کہ پی سی بی گھریلو سیریز کے لئے ہری جھنڈی دینے سے پہلے کئی دور کی سیکورٹی جانچ کرتا ہے۔ ایسے میں نیوزی لینڈ بورڈ کا پاکستان دورہ منسوخ کرنے کا فیصلہ قابل معافی نہیں ہے۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Share this:
      نئی دہلی: پاکستان کرکٹ کے لئے گزشتہ کچھ دن اچھے نہیں گزرے ہیں۔ پہلے نیوزی لینڈ اور پھر انگلینڈ نے یہاں کا دورہ کرنے سے انکار کردیا۔ حالانکہ اس کے لئے دونوں ٹیموں نے الگ الگ وجہ دی، جہاں نیوزی لینڈ کی ٹیم سیکورٹی اسباب کا حوالہ دے کر پاکستان سے چلی گئی۔ وہیں، انگلینڈ اور ویلس کرکٹ بورڈ نے کھلاڑیوں کے ذہنی اور جسمانی صحت کی بات کہہ کر پاکستان کا دورہ کرنے سے انکار کردیا۔ ای سی بی اور نیوزی لینڈ بورڈ کے اس فیصلے کو پاکستان ہضم نہیں کر پایا اور وہاں کے موجودہ اور سابق کھلاڑی ان دونوں ممالک کے خلاف آگ اگل رہے ہیں۔ اب اس فہرست میں شاہد آفریدی بھی شامل ہوگئے ہیں۔

      شاہد آفریدی نے انکشاف کیا کہ پی سی بی گھریلو سیریز کے لئے ہری جھنڈی دینے سے پہلے کئی دور کی سیکورٹی جانچ کرتا ہے۔ ایسے میں نیوزی لینڈ بورڈ کا پاکستان دورہ منسوخ کرنے کا فیصلہ قابل معافی نہیں ہے۔ انہوں نے کرکٹ پاکستان سے بات چیت میں کہا کہ ہم سبھی جانتے ہیں کہ جب کسی بھی ٹیم کے دورے کی بات آتی ہے تو کئی محاذ پر جانچ ہوتی ہے۔ سفر کرنے والے ملک کے سیکورٹی افسران کے ذریعہ مناسب جانچ کی جاتی ہے۔ ٹیم کا آنے جانے کا راستہ پہلے سے طے ہوتا ہے۔ عمل مکمل ہونے کے بعد ہی مہمان ملک کو ٹور کے لئے ہری جھنڈی دکھائی جاتی ہے۔

      شاہد آفریدی نے انکشاف کیا کہ پی سی بی گھریلو سیریز کے لئے ہری جھنڈی دینے سے پہلے کئی دور کی سیکورٹی جانچ کرتا ہے۔ ایسے میں نیوزی لینڈ بورڈ کا پاکستان دورہ منسوخ کرنے کا فیصلہ قابل معافی نہیں ہے۔ فائل فوٹو
      شاہد آفریدی نے انکشاف کیا کہ پی سی بی گھریلو سیریز کے لئے ہری جھنڈی دینے سے پہلے کئی دور کی سیکورٹی جانچ کرتا ہے۔ ایسے میں نیوزی لینڈ بورڈ کا پاکستان دورہ منسوخ کرنے کا فیصلہ قابل معافی نہیں ہے۔ فائل فوٹو


      بھارت سے ای-میل آیا تھا: فواد چودھری

      واضح رہے کہ پاکستان کے وزیر اطلاعات ونشریات فواد چودھری نے دعویٰ کیا تھا کہ نیوزی لینڈ کی ٹیم کو ہندوستان سے ایک دھمکی بھرا ای-میل آیا تھا۔ انہوں نے کہا تھا کہ یہ ای میل ہندوستان سے آیا تھا، لیکن وی پی این کے ذریعہ اس کی لوکیشن سنگا پور دکھائی گئی۔

      ہندوستان کو فالو نہیں کرنا چاہئے

      پاکستان کے وزیر کے اس دعوے پر شاہد آفریدی نے کہا کہ دیگر ’تعلیم یافتہ اقوام‘ کو ہندوستان کے نقش قدم پر نہیں چلنا چاہئے اور اپنی سمجھ کے مطابق فیصلہ لینا چاہئے۔ اگر آپ کو بڑی تصویر دیکھنی ہے تو مجھے لگتا ہے کہ ہمیں ایک ایسا فیصلہ لینے کی ضرورت ہے، جو دنیا کو دکھائے کہ ہم بھی ایک ملک ہیں اور ہمارا اپنا وقار ہے۔ ایک ملک ہمارے پیچھے ہے تو ٹھیک ہے، لیکن مجھے نہیں لگتا کہ دوسرے ممالک کو بھی وہی غلطی کرنی چاہئے۔ یہ سبھی تعلیم یافتہ ملک ہیں اور انہیں ہندوستان کو فالو نہیں کرنا چاہئے۔ اس کے بجائے، کرکٹ کو تعلقات میں سدھار کرنا چاہئے۔ ہندوستان میں بھی صورتحال خراب تھے، ہمیں دھمکیاں مل رہی تھیں۔ ہمارے بورڈ نے ہمیں جانے کے لئے کہا اور ہم وہاں گئے۔ اسی طرح کووڈ-19 کے دوران انگلینڈ میں جو حالات تھے، کرکٹ چلتا رہا۔
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: