ہوم » نیوز » اسپورٹس

مصیبت میں پھنسے شعیب اختر، FIA نے بھیجا سمن، مسلسل سائبر اسٹاکنگ کا الزام

شعیب اختر پر پی سی بی کے قانونی صلاحکار تفضل رضوی کے خلاف غلط بیانی کا الزام ہے۔ تفضل رضوی کا الزام ہے کہ اختر نے ان کے خلاف انٹریٹ کا استعمال کرکے بغیر ثبوت اور بنیاد کے بیان بازی کی ہے۔

  • Share this:
مصیبت میں پھنسے شعیب اختر، FIA نے بھیجا سمن، مسلسل سائبر اسٹاکنگ کا الزام
شعیب اختر کا پی سی بی پر بے حد سنگین الزام

نئی دہلی: دنیا کے سب سے تیز گیند باز اور پاکستان کے سابق کھلاڑی شعیب اختر (Shoaib Akhtar) ایک مرتبہ پھر سے مصیبت میں ہیں۔ شعیب اختر کو فیڈرل انویسٹیگیشن ایجنسی FIA  نے سمن بھیجا ہے اور انہیں اس ایجنسی نے اپنا بیان درج کرانے کیلئے بلایا ہے۔ شعیب اختر (Shoaib Akhtar) کو سائبر اسٹاکنگ کے معاملے میں سمن بھیجا گیا ہے۔ شعیب اختر پر پی سی بی کے قانونی صلاحکار تفضل رضوی کے خلاف غلط بیانی کا الزام ہے۔ تفضل رضوی کا الزام ہے کہ اختر نے ان کے خلاف انٹریٹ کا استعمال کرکے بغیر ثبوت اور بنیاد کے بیان بازی کی ہے۔

کیا ہے معاملہ؟

بتادیں کہ شعیب اختر (Shoaib Akhtar) نےاپنے یوٹیوب چینل پر پی سی بی کے قانونی صلاحکار تفضل رضوی کے خلاف بیان دئےتھے۔ انہوں رضوی پراپنے نجی حقوق کیلئے کھلاڑیوں کا کیریئر بربادکرنے کی بات کہی تھی۔ شعیب نےتفضل رضوی کو نیچ اور ناکارہ کہاتھا۔ شعیب اختر کے مطابق تفضل رضوی کھلاڑیوں کے خلاف نجی ایجنڈہ چلاتے ہیں۔

پی سی بی کے قانونی محکمہ کو کہا تھا ناکارہ

شعیب اختر نے کہا تھا کہ ’پی سی بی کا قانونی شعبہ گرا ہوا اور نالائق ہے۔ خاص طور پر تفضل رضوی جو گزشتہ 15-10 سالوں سے پی سی بی کے ساتھ ہے اور تقریباً ہر کیس ہارا ہے۔ تفضل رضوی ایک کیس تو مجھ سے بھی ہارا ہے۔ اس نے شاہد آفریدی اور یونس خان کو بھی عدالت میں گھسیٹا تھا۔ ہمیشہ اسٹار کھلاڑیوں کی عزت ہونی چاہئے۔ تفضل رضوی جیسے دو ٹکے کے وکیلوں کو کوئی نہیں جانتا۔ تفضل رضوی پی سی بی سے پیسے بناتا ہے، کیس الجھاتا ہے اور پھر ہار جاتا ہے’۔ شعیب اختر نے یہ بھی کہا کہ پاکستان کرکٹ بورڈ نے خود میچ فکسنگ کے قصورواروں کو بچایا اور اب کھلاڑی اس چیز کو معمولی سمجھنے لگے ہیں۔ شعیب اختر نے فکسنگ کو کرمنل ایکٹ بنانے کا مطالبہ کیا تاکہ اس میں شامل ہونے والے کھلاڑیوں کو جیل کی سزا ہو۔

شعیب اختر نے کہا تھا کہ ’پی سی بی کا قانونی شعبہ گرا ہوا اور نالائق ہے۔ خاص طور پر تفضل رضوی جو گزشتہ 15-10 سالوں سے پی سی بی کے ساتھ ہے اور تقریباً ہر کیس ہارا ہے۔ تفضل رضوی ایک کیس تو مجھ سے بھی ہارا ہے۔ اس نے شاہد آفریدی اور یونس خان کو بھی عدالت میں گھسیٹا تھا۔ ہمیشہ اسٹار کھلاڑیوں کی عزت ہونی چاہئے۔ دو ٹکے کے وکیلوں کو کوئی نہیں جانتا۔ تفضل رضوی پی سی بی سے پیسے بناتا ہے، کیس الجھاتا ہے اور پھر ہار جاتا ہے’۔ شعیب اختر نے یہ بھی کہا کہ پاکستان کرکٹ بورڈ نے خود میچ فکسنگ کے قصورواروں کو بچایا اور اب کھلاڑی اس چیز کو معمولی سمجھنے لگے ہیں۔ شعیب اختر نے فکسنگ کو کرمنل ایکٹ بنانے کا مطالبہ کیا تاکہ اس میں شامل ہونے والے کھلاڑیوں کو جیل کی سزا ہو۔

اس بیان سے ناراض شعیب اختر (Shoaib Akhtar) پر 100 ملین پاکستانی وپئے کا دعویٰ ٹھوک دیا تھا۔ حالانکہ اس کے باوجود شعیب اختر اپنے دعوؤں پر قائم ہیں اور انہوں نے کہا تھا کہ وہ تفضل رضوی کے نوٹس کا جواب دیں گے۔ شعیب اختر نے تفضل رضوی کے نوٹس کو جھوٹ اور من گھڑت باتوں سے بھرا ہوا بتایا تھا۔ بتادیں کہ شعیب نے سلمان نیازی کو اپنا وکیل مقرر کیا ہے۔ شعیب کو اس مسئلے پر یونس خان کی بھی حمایت ملی تھی۔ یونس خان نے شعیب اختر کی بات کو صحیح ٹھہرایا تھا۔
First published: Jun 05, 2020 07:38 AM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading