உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Commonwealth Games: ہندوستان کی ہاکی ٹیمیں کامن ویلتھ گیمز سے ہٹیں ، برطانیہ کو دیا کرارا جواب

    Commonwealth Games: ہندوستان کی ہاکی ٹیمیں کامن ویلتھ گیمز سے ہٹیں ، برطانیہ کو دیا کرارا جواب ۔ (Hockey India Instagram)

    Commonwealth Games: ہندوستان کی ہاکی ٹیمیں کامن ویلتھ گیمز سے ہٹیں ، برطانیہ کو دیا کرارا جواب ۔ (Hockey India Instagram)

    Commonwealth Games: ہاکی انڈیا نے منگل کو جاری ایک بیان میں کہا کہ انگلینڈ پورے یورپ میں کورونا وبا سے سب سے زیادہ متاثر ہے ۔ ایسی صورت حال میں ہندوستانی مردوں اور خواتین کی ہاکی ٹیموں کے لیے اگلے سال برمنگھم میں ہونے والے دولت مشترکہ کھیلوں میں حصہ لینا مناسب نہیں ہوگا۔

    • UNI
    • Last Updated :
    • Share this:
      نئی دہلی : ہاکی انڈیا نے منگل کے روز انگلینڈ میں کورونا کے خطرے اور سخت کوارنٹائن ضابطوں کے پیش نظر برمنگھم 2022 کامن ویلتھ گیمز سے ہندوستانی مرد اور خواتین کی ہاکی ٹیم کا نام واپس لے لیا ۔ اس سے قبل انگلینڈ نے پیر کے روز اپنی جونیئر ہاکی ٹیم کا نام اگلے سال ہندوستان میں ہونے والے ہاکی ورلڈ کپ سے واپس لے لیا تھا ۔

      ہاکی انڈیا نے منگل کو جاری ایک بیان میں کہا کہ انگلینڈ پورے یورپ میں کورونا وبا سے سب سے زیادہ متاثر ہے ۔ ایسی صورت حال میں ہندوستانی مردوں اور خواتین کی ہاکی ٹیموں کے لیے اگلے سال برمنگھم میں ہونے والے دولت مشترکہ کھیلوں میں حصہ لینا مناسب نہیں ہوگا۔ ہاکی انڈیا نے یہ بھی واضح کیا ہے کہ ہندوستانی ٹیموں کی پوری توجہ ایشین گیمز پر ہے جو کہ 2024 پیرس اولمپکس کی تیاریوں کے لیے بہت اہم ہے۔

      ہاکی انڈیا نے کہا کہ برمنگھم میں کامن ویلتھ گیمز اگلے سال 28 جولائی سے 8 اگست تک ہوں گے ، جبکہ ایشین گیمز 10 سے 25 ستمبر تک ہوں گے۔ دولت مشترکہ کھیلوں کے اختتام اور ایشیائی کھیلوں کے آغاز کے درمیان صرف 32 دن کی کھڑکی دستیاب ہے۔ ایشین گیمز اہم ہیں کیونکہ یہ 2024 کے پیرس اولمپکس کے لیے براعظمی کوالیفکیشن ٹورنامنٹ ہے۔ ایشین گیمز کی اہمیت کو مدنظر رکھتے ہوئے ، ہم کامن ویلتھ گیمز میں ہندوستانی ہاکی ٹیموں کے کسی بھی رکن کا کورونا کی زد میں آنے کا خطرہ مول نہیں لے سکتے ہیں ۔

      خیال رہے کہ انگلینڈ نے حال ہی میں ہندوستان کے کورونا ویکسینیشن کے سرٹیفکیٹس کو منظوری دینے انکار کردیا تھا اور ویکسین کی دونوں ڈوز لینے کے باوجود ہندوستان سے آنے والے مسافروں کے لیے 10 دن کا کوارنٹائن لازمی قرار دیا تھا۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: