உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    ٹی-20 عالمی کپ میں پاکستان کی نیند اڑانے کے لئے وراٹ کوہلی کا نام ہی کافی، ایک بار بھی نہیں ہوئے آوٹ

    ٹی-20 عالمی کپ میں پاکستان کی نیند اڑانے کے لئے وراٹ کوہلی کا نام ہی کافی، ایک بار بھی نہیں ہوئے آوٹ

    ٹی-20 عالمی کپ میں پاکستان کی نیند اڑانے کے لئے وراٹ کوہلی کا نام ہی کافی، ایک بار بھی نہیں ہوئے آوٹ

    T20 World Cup 2021: ٹیم انڈیا (Team India) ٹی-20 عالمی کپ کے لئے تیار ہے۔ ٹیم کو پہلے مقابلے میں 24 اکتوبر کو پاکستان سے (India vs Pakistan) مدمقابل ہونا ہے۔ کپتان وراٹ کوہلی (Virat Kohli) کا ریکارڈ پاکستان کے خلاف بے حد شاندار رہا ہے۔ وہ ٹی-20 عالمی کپ میں اس کے خلاف آج تک آوٹ نہیں ہوئے ہیں اور دو نصف سنچری بھی لگائے ہیں۔

    • Share this:
      نئی دہلی: ٹی-20 عالمی کپ (T20 World Cup 2021) کے مقابلے 17 اکتوبر سے شروع ہونے ہیں۔ ٹورنامنٹ کے لئے ٹیم انڈیا (Team India) کا اعلان ہوچکا ہے۔ وراٹ کوہلی (Virat Kohli) کے لئے عالمی کپ بے حد اہم ہے، کیونکہ وہ اس کے بعد ٹی-20 ٹیم کی کپتانی چھوڑ دیں گے۔ ٹیم پہلے مقابلے میں 24 اکتوبر کو پاکستان سے مد مقابل ہوگی۔ کوہلی کا ریکارڈ پاکستان کے خلاف بے حد شاندار رہا ہے۔ وہ اب تک ٹی-20 عالمی کپ میں پاکستان کے خلاف (India vs Pakistan) آوٹ نہیں ہوئے ہیں۔ اتنا ہی نہیں تینوں میچ میں ٹیم کو جیت بھی ملی ہے۔ یعنی اس بار بھی مخالف ٹیم کو ہندوستانی کپتان زبردست جواب دے سکتے ہیں۔

      وراٹ کوہلی نے ٹی-20 عالمی کپ میں پاکستان کے خلاف 78*, 36* اور 55* کی اننگ کھیلی ہے۔ 3 میں سے 2 میچ میں کوہلی پلیئر آف دی میچ بھی بنے۔ پہلے ناٹ آوٹ 78 رن کی اننگ کی۔ سال 2012 میں کولمبو میں کھیلے گئے اس مقابلے میں پاکستان کی ٹیم پہلے بلے بازی کرتے ہوئے صرف 128 رن بناکر آوٹ ہوگئی تھی۔ تیز گیند باز لکشمی پتی بالا جی نے سب سے زیادہ تین وکٹ حاصل کئے۔ جواب میں ٹیم انڈیا نے ہدف 17 اوور میں دو وکٹ کے نقصان پر حاصل کرلیا۔ کوہلی نے 61 گیندوں پر 8 چوکے اور دو چھکے کی مدد سے ناٹ آوٹ 78 رن بنائے اور پلیئر آف دی میچ بنے۔

      ہر میچ میں ٹیم کی طرف سے بنائے سب سے زیادہ رن

      سال 2014 میں ڈھاکہ میں کھیلے گئے مقابلے میں پاکستان نے ایک بار پھر پہلے بلے بازی کی۔ اس نے 7 وکٹ پر 130 رن بنائے۔ ٹیم انڈیا نے ہدف کو 18.3 اوور میں تین وکٹ پر حاصل کرلیا۔ وراٹ کوہلی 36 رن بناکر ناٹ آوٹ رہے۔ وہ اس بار بھی ٹیم کی طرف سے سب سے زیادہ رن بنانے والے بلے باز تھے۔ وہیں سال 2016 میں کولکاتا میں ایک بار پھر دونوں ٹیمیں آمنے سامنے ہوئیں۔ 18 اوور کے مقابلے میں پاکستان نے پہلے کھیلتے ہوئے 5 وکٹ پر 118 رن بنائے۔ ٹیم انڈیا نے 15.5 اوور میں 4 وکٹ پر ہدف حاصل کرلیا۔ کوہلی 55 رن بناکر ناٹ آوٹ رہے اور پلیئر آف دی میچ بنے۔ تینوں میچ میں کوہلی ٹیم انڈیا کی طرف سے سب سے بڑا اسکور بنانے والے بلے باز رہے۔

      100 سے زیادہ رن بنانے والے واحد بلے باز

      ٹی-20 عالمی کپ میں پاکستان کے خلاف سب سے زیادہ رن بنانے والے ہندوستانی کھلاڑیوں کی بات کریں تو وراٹ کوہلی ٹاپ پر ہیں۔ وہ 3 میچ میں 169 رن بناچکے ہیں اور اب تک آوٹ نہیں ہوئے ہیں۔ اسٹرائیک ریٹ 130 کا ہے۔ دیگر کوئی ہندوستانی کھلاڑی 100 رن کے اعدادوشمار کو نہیں چھو سکا ہے۔ گوتم گمبھیر 75 رن کے ساتھ دوسرے نمبر پر ہیں۔ وہیں پاکستان کے کھلاڑیوں کی بات کی جائے تو شعیب ملک نے ہندوستان کے خلاف سب سے زیادہ 100 رن بنائے ہیں۔ ٹی-20 عالمی کپ میں آج تک پاکستان کی ٹیم ہندوستان کو نہیں ہراسکی ہے اور سبھی 5 میچ میں اسے شکست ملی ہے۔ ٹیم انڈیا ایک بار 2007 میں ٹی-20 عالمی کپ کا خطاب جیتنے میں کامیاب رہی ہے۔

       

       
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: