உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    ٹی-20 عالمی کپ: بابر اعظم نے شکست کے بعد لگائی پاکستانی ٹیم کی کلاس، کہا- اگر کسی نے کیا ایسا تو...

    بابر اعظم نے شکست کے بعد لگائی پاکستانی ٹیم کی کلاس

    بابر اعظم نے شکست کے بعد لگائی پاکستانی ٹیم کی کلاس

    PAK vs AUS T20 World Cup: ٹی-20 عالمی کپ میں سیمی فائنل سے پہلے تک پاکستان نے ایک بھی مقابلہ نہیں گنوایا تھا، لیکن آسٹریلیا نے سیمی فائنل (PAK vs AUS T20 World Cup) میں اس کی فاتحانہ مہم پر بریک لگا دیا اور پاکستان کا ٹی -20 عالمی کپ جیتنے کا خواب چکنا چور ہوگیا۔

    • Share this:
      نئی دہلی: ٹی-20 عالمی کپ میں سیمی فائنل سے پہلے تک پاکستان نے ایک بھی مقابلہ نہیں گنوایا تھا، لیکن آسٹریلیا نے سیمی فائنل (PAK vs AUS T20 World Cup) میں اس کی فاتحانہ مہم پر بریک لگا دیا اور پاکستان کا ٹی -20 عالمی کپ جیتنے کا خواب چکنا چور ہوگیا۔ حالانکہ اس کے بعد بھی کپتان بابر اعظم (Babar Azam) کا حوصلہ نہیں ٹوٹا۔ میچ کے بعد ڈریسنگ روم میں ان کی تقریر سے یہ بات ثابت بھی ہوگئی۔ انہوں نے کسی ایک کھلاڑی پر شکست کا ٹھیکرا نہیں پھوڑا اور ساتھی کھلاڑیوں کو بھی ایسا نہیں کرنے کی ہدایت دی۔ اس کا ایک ویڈیو پی سی بی (PCB) نے ٹوئٹر پر شیئر کیا ہے۔

      بابر اعظم جب ڈریسنگ روم میں پہنچے تو ان کے چہرے پر بھی مایوسی تھی، لیکن انہوں نے کھلاڑیوں کا حوصلہ بڑھایا۔ پاکستان کے کپتان نے کہا، ’افسوس ہم سب کو ہے، ہم نے کیا غلط کیا، کہاں چوک ہوئی، یہ کوئی ایک دوسرے کو نیں بتائے گا، کیونکہ یہ سب جانتے ہیں۔ انہوں نے کھلاڑیوں سے کہا کہ کوئی کسی سے یہ نہیں کہے گا کہ اس کی غلطی یا اس کی خامی سے ہم ہارے۔ ہمیں ایک یونٹ کے طور پر اپنے اتحاد کو بنائے رکھنا ہے۔ پوری ٹیم خراب کھیلی، اس لئے کسی پر نکتہ چینی یا انگلی نہیں اٹھائے گا‘۔

      بابر اعظم جب ڈریسنگ روم میں پہنچے تو ان کے چہرے پر بھی مایوسی تھی، لیکن انہوں نے کھلاڑیوں کا حوصلہ بڑھایا۔
      بابر اعظم جب ڈریسنگ روم میں پہنچے تو ان کے چہرے پر بھی مایوسی تھی، لیکن انہوں نے کھلاڑیوں کا حوصلہ بڑھایا۔


      ہم نے جو یونٹ تیار کی ہے، وہ ٹوٹنے نہ پائے: بابر اعظم

      بابر اعظم نے مزید کہا، ‘ہاں، ہم ہارگئے ہیں، لیکن کوئی بات نہیں۔ ہم اس ہار سے سبق لیں گے اور یہاں کی غلطیوں کو آگے ہونے والی سیریز اور ٹورنامنٹ میں نہیں دوہرائیں گے۔ سبھی کو ایک بات دھیان رکھنی ہے، یہ یونٹ جو ہم نے بنائی ہے، وہ ٹوٹنے نہ پائے۔ ایک ہار سے ہماری یونٹ ٹوٹنی نہیں چاہئے۔ ہم سبھی نے اپنا کردار نبھایا ہے، فیملی جیسا ماحول تیار کیا ہے۔ ایک نتیجے سے اس پر آنچ نہیں آنی چاہئے۔ نتیجہ ہمارے ہاتھ میں نہیں ہے، لیکن ہمیں مسلسل اچھی کارکرگی کرنی ہے۔ اس کے بعد نتیجے اپنے آپ آنے لگیں گے‘۔



      یہ بھی پڑھیں۔

      ٹی-20 عالمی کپ: پاکستان کی شکست کے بعد ہندوستانی ٹینس اسٹار ثانیہ مرزا ہو رہی ہیں ٹرول


      بابر عظم نے کھلاڑیوں کو دی وارننگ

      بابراعظم نے کھلاڑیوں کو یہ وارننگ دی کہ کوئی بھی کسی ایک کھلاڑی کو ہار کا ذمہ دار نہیں ٹھہرائے گا اور اگر میں نے کسی کو ایسا کرتے ہوئے دیکھا اور سن لیا تو اچھا نہیں ہوگا۔ میں اس کے خلاف کیسا ہوجاوں گا، وہ بتانے کی ضرورت نہیں۔ دراصل بابر اعظم، یہاں حسن علی کا بچاو کر رہے تھے، جنہوں نے میچ کے 19 ویں اوور میں میتھیو ویڈ کا کیچ چھوڑ دیا تھا اور اس کے بعد میتھیو ویڈ نے مسلسل تین چھکے لگاتے ہوئے آسٹریلیا کو جیت دلا دی تھی۔ اس کے بعد سے حسن علی کو مداح شکست کا قصور وار ٹھہرا رہے ہیں۔ ٹوئٹر پر انہیں ’ویلین (کھلنائیک)‘ بنایا جا رہا ہے۔
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: