உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    طالبان راج میں کرکٹ پر نہیں لگے گا بریک، افغانستان کو آسٹریلیا سے ٹسٹ کھیلنے کی منظوری ملی

    طالبان راج میں کرکٹ پر نہیں لگے گا بریک، افغانستان کو آسٹریلیا سے ٹسٹ کھیلنے کی منظوری ملی

    طالبان راج میں کرکٹ پر نہیں لگے گا بریک، افغانستان کو آسٹریلیا سے ٹسٹ کھیلنے کی منظوری ملی

    Taliban in Afghanistan: افغانستان سے امریکہ اور ناٹو فورسیز کے باہر نکلنے کے بعد یہ خدشہ ظاہر کیا جا رہا تھا کہ طالبان کے اقتدار میں کرکٹ اور دوسرے کھیلوں پر اثرپڑے گا۔ تاہم افغانستان کرکٹ بورڈ کے افسران بار بار یہ بات دوہراتے رہے تھے کہ کرکٹ کو طالبان کی حمایت ملتی رہے گی۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Share this:
      نئی دہلی: طالبان کے اقتدار (Taliban in Afghanistan) میں کرکٹ پر پابندی نہیں لگے گی۔ کم ازکم فی الحال تو ایسا ہی نظر آرہا ہے۔ افغانستان کا اقتدار سنبھالنے کے بعد طالبان نے ملک کی کرکٹ ٹیم کو آسٹریلیا کے خلاف نومبر میں ہونے والے ٹسٹ میچ کھیلنے کی منظوری دے دی ہے۔ افغانستان کرکٹ بورڈ (Afghanistan Cricket Board) کے چیف ایگزیکٹیو حامد شنواری (Hamid Shinwari) نے نیوز ایجنسی اے ایف پی کو یہ اطلاع دی ہے۔ اس سے یہ امید پیدا ہوئی ہے کہ طالبان کے اقتدار میں بھی بین الاقوامی کرکٹ میچ پہلے کی طرح جاری رہیں گے۔

      افغانستان کو اس سال 27 نومبر- یکم دسمبر تک ہوبارٹ میں واحد ٹسٹ میچ کھیلنا ہے۔ یہ مقابلہ گزشتہ سال ہی ہونا تھا، لیکن کورونا کے سبب نافذ یاترا پابندی کی وجہ سے میچ نہیں ہو پایا تھا۔ یہ آسٹریلیا میں افغانستان کا پہلا میچ ہوگا۔

      افغانستان کی انڈر-19 ٹیم بنگلہ دیش دورے پر

      آسٹریلیا دورے سے پہلے افغانستان کی ٹیم 17 اکتوبر سے 15 نومبر تک متحدہ عرب امارات میں ہونے والے ٹی-20 عالمی کپ میں نظر آئے گی۔ اے سی بی کے چیف ایگزیکٹیوحامد شنواری (Hamid Shinwari) نے اس بات کی بھی تصدیق کی ہے کہ افغانستان کی انڈر-19 کرکٹ ٹیم اس ماہ کے آخر میں بنگلہ دیش کا دورہ کرے گی۔

      طالبان اپنی شبیہ بدلنے میں مصروف

      طالبان اس سے قبل 1996 میں بھی افغانستان کی اقتدار پر قابض ہوا تھا۔ 5 سال تک اس کے ہاتھ میں ملک کی قیادت تھی۔ تب اس تنظیم نے تفریح کے تمام وسائل پر پوری طرح پابندی عائد کردی تھی۔ اس میں کئی کھیل بھی شامل تھے۔ کہا جاتا ہے کہ تب اسٹیڈیم کا استعمال عوامی طور پر کسی کو سزا دینے کے لئے ہوتا تھا۔ اس دور میں بھی اس تنظیم نے کرکٹ پر کسی طرح کی پابندی نہیں عائد کی تھی۔ کہا جاتا ہے کہ طالبان کو بھی کرکٹ کافی پسند ہے۔ طالبان نے گزشتہ ماہ راجدھانی کابل پر قبضہ کرنے کے بعد ملک میں اسلامی قانون نافذ کرنے کا عزم ظاہر کیا ہے۔

      طالبان کرکٹ کو حمایت کرتا رہے گا: اے سی بی

      افغانستان سے امریکہ اور ناٹو فورسیز کے باہر نکلنے کے بعد یہ خدشہ ظاہر کیا جا رہا تھا کہ طالبان کے اقتدار میں کرکٹ اور دوسرے کھیلوں پر اثر پڑے گا، لیکن افغانستان کرکٹ بورڈ کے افسران بار بار یہی بات دوہراتے رہے تھے کہ کرکٹ کو طالبان کی حمایت ملتی رہے گی۔ حالانکہ حال ہی میں کورونا اور سفر انتظامات میں آرہی پریشانیوں کے سبب افغانستان کی پاکستان کے خلاف گھریلو ونڈے سیریز منسوخ ہوگئی تھی۔ یہ سیریز سری لنکا میں منتقل کردی گئی تھی۔
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: