உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Tokyo 2020: ہندوستانی ہاکی ٹیم کی جیت پر مداحوں کو یاد آئے شاہ رخ خان، کوچ مارن کو بتایا ’کبیر خان‘

    ہندوستانی ہاکی ٹیم کی جیت پر مداحوں کو یاد آئے شاہ رخ خان، کوچ مارن کو بتایا ’کبیر خان‘

    ہندوستانی ہاکی ٹیم کی جیت پر مداحوں کو یاد آئے شاہ رخ خان، کوچ مارن کو بتایا ’کبیر خان‘

    Tokyo Olympics: ہندوستانی خاتون ہاکی ٹیم (Indian Women's Hockey Team) نے ٹوکیو اولمپک (Tokyo Olympics) میں بڑی کامیابی درج کی، پیر کو ہوئے کوارٹر فائنل میں ہندوستان نے آسٹریلیا کو 0-1 سے شکست دے کر پہلی بار سیمی فائنل میں جگہ بنائی۔ اس جیت کے بعد سے ہی مداحوں کو شاہ رخ خان (Shahrukh Khan) یاد آرہے ہیں اور خاتون ٹیم کے کوچ شارڈ مارن (Sjoerd Marijne) کا موازنہ ’چک دے انڈیا (Chak De India)‘ فلم میں شاہ رخ خان کے ذریعہ نبھائے کوچ کے کردار کبیر خان (Kabir Khan) سے کیا جارہا ہے۔

    • Share this:
      نئی دہلی: ہندوستانی خاتون ہاکی ٹیم (Indian Women's Hockey Team) نے ٹوکیو اولمپک (Tokyo Olympics) میں بڑی کامیابی درج کی۔ پیر کو ہوئے کوارٹر فائنل میچ میں ہندوستان نے آسٹریلیا کو 0-1 سے شکست دے کر پہلی بار سیمی فائنل میں جگہ بنائی۔ ہندوستان کی یہ کامیابی اس لئے بھی بڑی ہے۔ کیونکہ پہلے تین میچ گنوانے کے بعد اس پر اولمپک سے باہر ہونے کا خطرہ منڈرا رہا تھا، لیکن کوچ شورڈ مارن (Sjoerd Marijne) کی قیادت میں ٹیم نے زبردست واپسی کی اور اگلے تین مقابلے جیت کر سیمی فائنل میں جگہ بنا لی۔

      ہندوستانی ہاکی ٹیم کی اس جیت سے پورا ملک خوش ہے۔ ملک کی بیٹیوں پر ہر ہندوستانی کو فخر ہے۔ ٹوئٹر پر لوگ خاتون ٹیم کے کوچ شورڈ مارن کی تعریفوں کے پُل باندھ رہے ہیں اور ان کا موازنہ شاہ رخ خان سے کیا جا رہا ہے۔

      Tokyo Olympics: ہندوستانی خاتون ہاکی ٹیم (Indian Women's Hockey Team) نے ٹوکیو اولمپک (Tokyo Olympics) میں بڑی کامیابی درج کی، پیر کو ہوئے کوارٹر فائنل میں ہندوستان نے آسٹریلیا کو 0-1 سے شکست دے کر پہلی بار سیمی فائنل میں جگہ بنائی۔ اس جیت کے بعد سے ہی مداحوں کو شاہ رخ خان (Shahrukh Khan) یاد آرہے ہیں اور خاتون ٹیم کے کوچ شارڈ مارن (Sjoerd Marijne) کا موازنہ ’چک دے انڈیا (Chak De India)‘ فلم میں شاہ رخ خان کے ذریعہ نبھائے کوچ کے کردار کبیر خان (Kabir Khan) سے کیا جارہی ہے۔

      واضح رہے کہ شاہ رخ خان نے 2007 میں چک دے انڈیا نام کی ایک فلم کی تھی۔ اس میں انہوں نے ہندوستانی خواتین ہاکی ٹیم کے کوچ کا کردار نبھایا تھا، جس کا نام کبیر خان تھا۔ اب خاتون ہاکی ٹیم کے کوچ کو بھی مداح اسی ’چک دے انڈیا‘ کا کبیر خان بتا رہے ہیں۔ کوئی انہیں آج کا دروناچاریہ بتا رہا ہے۔ اتنا ہی نہیں، لوگ انہیں ہندوستان کے لئے ہیرو بتا رہے ہیں اور 130 کروڑ ہندوستانیوں کی امیدوں سے انہیں جوڑ کر دیکھ رہے ہیں۔



      ہندوستانی خاتون ہاکی ٹیم کے پہلی بار اولمپک کے سیمی فائنل میں پہنچنے کا سہرا لوگ کوچ کوچ شورڈ مارن کو دے رہے ہیں اور ان کا موازنہ درونا چاریہ سے کر رہے ہیں۔ (Shikha Rai Twitter)




      ایک صارف نے لکھا کہ خاتون ہاکی ٹیم ریو میں 12 ٹیموں میں آخری مقام پر رہی تھی اور اس بار آسٹریلیا کو شکست دے کر سیمی فائنل میں پہنچی ہے۔ ایسے میں یہ تبدیلی ہندوستانی ہاکی کے لئے بہت بڑی ہے اور اس کا سہرا کوچ شورڈ مارن کو جاتا ہے۔





      کوچ شورڈ مارن نے خود ایک دہائی تک فیلڈ ہاکی کھیلی ہے۔ انہیں ریو اولمپک کے بعد ٹیم کا کوچ بنایا گیا تھا۔ ان کے کندھوں پر شکست اور ناکامی سے ٹوٹی ٹیم کو جوڑنے کی ذمہ داری تھی اور انہوں نے ٹھیک ’چک دے انڈیا‘ کے کبیر خان  کی طرح ہی ٹیم میں جان پھونکی۔ اس لئے لوگ شورڈ مارن کو اصل زندگی کا کبیر خان بول رہے ہیں۔ شورڈ مارن نے ایک وقت ٹوکیو اولمپک میں پچھڑ رہی ٹیم کا حوصلہ بڑھایا اور اس کا نتیجہ بھی برآمد ہوا۔ پہلے تین میچ گنوانے کے بعد ہندوستان کی بیٹیوں کے کھیل کا انداز بدلا اور نتیجہ سب کے سامنے ہے۔
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: