ہوم » نیوز » اسپورٹس

عمر اکمل کو بچانے آیا عمران خان کا معاون، پابندی کے خلاف اپیل کی

عمر اکمل کو 20 فروری، 2020 کو پاکستان سپر لیگ سے ایک دن پہلےمعطل کردیا گیا تھا اور اس کے بعد گزشتہ ماہ ان پر پابندی عائد کردی گئی۔

  • Share this:
عمر اکمل کو بچانے آیا عمران خان کا معاون، پابندی کے خلاف اپیل کی
عمر اکمل کو بچانے آیا عمران خان کا معاون، پابندی کے خلاف اپیل کی

اسلام آباد: پاکستان کے بلے باز عمر اکمل نے پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) کی انتظامی کمیٹی کے ان پر انسداد بدعنوانی ضابطہ اخلاق توڑنے کے الزام میں لگائے گئے تین سال کی پابندی کے خلاف سرکاری طور سے اپیل کی ہے۔ پی سی بی آئین کی دفعہ 37 کے مطابق عمر اکمل کی اپیل پر اب 15 دن کے اندر اندر ایک آزاد جج کی تقرری کی جائے گی۔ آزاد جج کیس اور عمر اکمل کو ملی سزا کا جائزہ لیں گے۔


عمر اکمل نے وزیر اعظم کے مشیر کو بنایا اپنا وکیل


واضح رہے کہ عمر اکمل کو بچانے کے لئے پاکستانی وزیر اعظم عمران خان کے مشیر بابر اعوان آگے آئے ہیں۔ وہ عمر اکمل کے وکیل ہیں۔ واضح رہے کہ عمر اکمل کو 20 فروری، 2020 کو پاکستان سپر لیگ سے ایک دن پہلے معطل کردیا گیا تھا اور اس کے بعد گزشتہ ماہ ان پر پابندی عائد کردی گئی۔ عمر اکمل کے بڑے بھائی کامران اکمل نے اس پابندی کو کافی زیادہ بتایا تھا اور انہوں نے اسے چیلنج دینے کی بات کہی تھی۔


عمر اکمل کو بچانے کے لئے پاکستانی وزیر اعظم عمران خان کے مشیر بابر اعوان آگے آئے ہیں۔
عمر اکمل کو بچانے کے لئے پاکستانی وزیر اعظم عمران خان کے مشیر بابر اعوان آگے آئے ہیں۔


شعیب اختر نے بھی عمر اکمل پر پابندی کو کافی بڑا بتایا تھا۔ شعیب اختر نے تو پی سی بی کے قانونی مشیر پر الزام لگا دیا تھا کہ وہ کھلاڑیوں کے خلاف اپنی نجی ایجنڈا چلاتے ہیں۔ شعیب اختر نے کہا تھا کہ پی سی بی ایک ہی سزا کے لئے کھلاڑیوں کو الگ الگ سزا دیتی ہے۔

شعیب اختر نے بھی عمر اکمل پر پابندی کو کافی بڑا بتایا تھا۔
پی سی بی کی انتظامی کمیٹی کے چئرمین فضل میراں چوہان نے گزشتہ 27 اپریل کو اکمل کو پی سی بی کی انسداد بدعنوانی ضابطہ اخلاق کی دو دفعات کے خلاف ورزی کا مجرم ٹھہرایا تھا اور ان پر کرکٹ کے تمام فارمیٹ میں کھیلنے پر تین سال کی پابندی لگائی تھی۔ پی سی بی نے پاکستان سپر لیگ (پی ایس ایل) کے دوران اسپاٹ فکسنگ کے معاملے کو لے کر اکمل پر الزام لگائے تھے اور بورڈ نے اس معاملے کو انتظامی کمیٹی کو بھیجا تھا۔


عمر اکمل پر آرٹیکل 4.8.1 کے تحت الزامات طے کئے گئے۔پی سی بی نے اکمل کے خلاف 20 مارچ کو بدعنوانی مخالف دفعات کو توڑنے کا الزام لگایا تھا۔اکمل نے اگرچہ کہا تھا کہ وہ کاروبار اور سماجی افعال کی وجہ سے بہت سے لوگوں سے ملتے ہیں اور اگر اس دوران کوئی موردالزام شخصیت ان سے ملتی ہے تو وہ اس بارے میں جوابدہ نہیں ہیں۔
First published: May 20, 2020 02:01 AM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading