ہوم » نیوز » اسپورٹس

خطرے میں سچن تندولکر کا عالمی ریکارڈ، اتنے میچوں میں 52 سنچری لگادیں گے وراٹ کوہلی

سچن تندولکر کرکٹ تاریخ کے سب سے عظیم بلے بازوں میں سے ایک ہیں۔ اپنے کیریئرمیں انہوں نے 100 بین الاقوامی سنچریاں لگائی ہیں۔ اپنے 200 میچوں کے ٹسٹ کیریئرمیں سچن تندولکرنے دنیا میں سب سے زیادہ 51 سنچریاں لگائی ہیں۔

  • Share this:
خطرے میں سچن تندولکر کا عالمی ریکارڈ، اتنے میچوں میں 52 سنچری لگادیں گے وراٹ کوہلی
وراٹ کوہلی اور ان کی اہلیہ انوشکا شرما: فائل فوٹو

کرکٹ کے بھگوان سچن تندولکر کرکٹ تاریخ کے سب سے عظیم بلے بازوں میں سے ایک ہیں۔ اپنے کیریئرمیں انہوں نے 100 بین الاقوامی سنچریاں لگائی ہیں۔ اپنے 200 میچوں کے ٹسٹ کیریئرمیں سچن تندولکرنے دنیا میں سب سے زیادہ 51 سنچریاں لگائی ہیں۔


سچن کے ان اعدادوشمارکو دیکھ کرلگتا تھا کہ اس ریکارڈ کو شاید ہی کوئی توڑ پائے گا، لیکن ٹیم انڈیا کے کپتان وراٹ کوہلی جس تیزی سے ٹسٹ کرکٹ میں سنچریاں لگارہےہیں، اسے دیکھ کر یہی لگ رہا ہے کہ وہ بے حد آسانی سے ماسٹر بلاسٹر کے ریکارڈ کو حاصل کرلیں گے۔


اعدادوشمار میں سچن سے آگے ہیں کوہلی


ٹیم انڈیا کے کپتان وراٹ کوہلی نے اب تک 67 ٹسٹ میچوں میں 22 سنچریاں لگا چکے ہیں جبکہ سچن تندولکرنے 67 ٹسٹ میچوں میں 18 سنچریاں لگائی تھیں۔ غورکرنے والی بات یہ ہے کہ وراٹ کوہلی کی پہلے 12 سنچریاں 43 ٹسٹ میچوں میں لگائی گئی ہیں، جبکہ ان کی گزشتہ 10 سنچریاں صرف 24 میچوں میں بنائی گئی ہیں۔

وراٹ نے جب سے اپنے کھیل میں تکنیکی تبدیلی کی ہے، وہ رنوں کا انبار لگارہے ہیں اور ٹیم انڈیا کا کپتان تقریباً ہر تیسرے ٹسٹ میں سنچری لگا رہا ہے۔ وراٹ کوہلی اگراسی رفتار سے سنچری لگاتے رہے تو وہ 139 ٹسٹ میچوں میں سچن کی 51  ٹسٹ سنچری کے اعدادوشمار تک پہنچ جائیں گے۔ مطلب وراٹ کوہلی سچن سے 61 ٹسٹ میچ پہلے 52 سنچری لگا سکتے ہیں۔

حالانکہ یہ ایک طویل وقت ہے، اس میں فٹنس بھی اصل معاملہ رہے گا، لیکن سب سے بڑی بات یہ ہے کہ وراٹ کوہلی دنیا کے سب سے فٹ کرکٹروں میں سے ایک ہیں۔ فٹنس کے ساتھ ساتھ ان کی بلے بازی ملک وبیرون ممالک کی پچوں پرایک جیسی دکھائی دیتی ہے۔ غیرملکی سرزمین پرتو وراٹ کوہلی اب دن بدن نکھرتے جارہے ہیں۔ ایسے میں کم ازکم یہ اندازہ تو لگایا ہی جاسکتا ہے کہ وراٹ کوہلی ہی وہ کھلاڑی ہیں جو سچن تندولکر کو پیچھے چھوڑ کر تاریخ رقم کریں گے۔
First published: Aug 06, 2018 04:58 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading