ہوم » نیوز » اسپورٹس

Syed Mushtaq Ali Trophy: آئی پی ایل میں نہیں ملا ایک بھی میچ کھیلنے کا موقع، اب لگائی 53 گیندوں میں شاندار سنچری

Syed Mushtaq Ali Trophy: جھارکھنڈ کے بلے باز وراٹ سنگھ (Virat Singh) نے طوفانی ناٹ آوٹ سنچری لگائی ہے۔

  • Share this:
Syed Mushtaq Ali Trophy: آئی پی ایل میں نہیں ملا ایک بھی میچ کھیلنے کا موقع، اب لگائی 53 گیندوں میں شاندار سنچری
آئی پی ایل میں نہیں ملا ایک بھی میچ کھیلنے کا موقع، اب لگائی 53 گیندوں میں شاندار سنچری

نئی دہلی: سید مشتاق علی ٹرافی (Syed Mushtaq Ali Trophy) ٹی -20 ٹورنامنٹ میں نوجوان بلے بازوں کا بلہ جم کر بول رہا ہے۔ جمعرات کو جھارکھنڈ کے 23 سالہ بلے باز وراٹ سنگھ (Virat Singh) نے آسام کے خلاف ناٹ آوٹ 103 رنوں کی طوفانی اننگ کھیلی۔ جھارکھنڈ نے پہلے بلے بازی کرتے ہوئے مقررہ 20 اوور میں تین وکٹ کے نقصان پر 233 رن بنائے۔ ہدف کا تعاقب کرنے اتری آسام کی ٹیم 7 وکٹ گنوا کر 182 رن ہی بناسکی۔ جھارکھنڈ نے یہ میچ 51 رنوں سے جیتا۔


وراٹ نے لگائی پہلی سنچری


ٹی-20 کرکٹ میں یہ وراٹ سنگھ کی پہلی سنچری ہے۔ انہوں نے صرف 53 گیندوں میں 12 چوکے اور تین چھکوں کی بدولت 103 رنوں کی اننگ کھیلی۔ وراٹ سنگھ آئی پی ایل میں سن رائزرس حیدرآباد کا حصہ ہیں۔ آئی پی ایل 2020 میں انہیں ایک بھی میچ کھیلنے کا موقع نہیں ملا تھا۔ گھریلو ٹی -20 ٹورنامنٹ میں انہوں نے گزشتہ تین میچوں میں 173 رن بنائے ہیں۔ اس بار وہ حیدرآباد کے پلیئنگ الیون کا حصہ ہوسکتے ہیں۔ ان کے علاوہ تجربہ کار بلے باز سوربھ تیواری 33 گیندوں پر پانچ چوکے اور تین چھکوں کی مدد سے 57 رن بنائے۔ ڈیتھ اووروں میں کمار دیوبرت نے 12 گیندوں پر 258 کی اسٹرائیک ریٹ سے 31 رن بنائے۔


بڑودہ، ہماچل اور اتراکھنڈ جیتے

بائیں ہاتھ کے تیز گیند باز لقمان میریوالا کے پانچ وکٹ کی مدد سے بڑودہ نے ایلیٹ گروپ سی میں چھتیس گڑھ کو 9 وکٹ سے زبردست شکست دی۔ میریوالا نے 8 رن دے کر پانچ وکٹ لئے اور پہلے بلے بازی کی دعوت پانے والے چھتیس گڑھ کو 17.3 اوور میں 90 رن پر سمیٹنے میں اہم کردار نبھایا۔ چھتیس گڑھ کی طرف سے سلامی بلے باز ششانک چکردھر نے سب سے زیادہ 20 رن بنائے۔ بڑودہ نے 12.3 اوور میں ایک وکٹ گنوا کر ہدف حاصل کردیا۔ تجربہ کار کیدار دیو گھر (ناٹ آوٹ 44) اور وشنو سولنکی (ناٹ آوٹ 42 رن) نے دوسرے وکٹ کے لئے 86 رن کی اٹوٹ شراکت کی۔ یہ بڑودہ کی لیگ مرحلے میں تیسری جیت ہے۔ اس نے اس سے پہلے ہماچل پردیش اور اتراکھنڈ کو ہرایا۔

ہماچل پردیش نے گجرات کو 26 رن سے ہرایا۔ ہماچل پردیش نے پہلے بلے بازی کے لئے مدعو کئے جانے پر رشی دھون (43)، دگوجے رانگی (ناٹ آوٹ 35 رن) اور پرشانت چوپڑا (35 رن) کے مناسب تعاون سے پانچ وکٹ پر 141 رن بنائے۔ اس کے جواب میں گجرات کی ٹیم 115 رن پر آوٹ ہوگئی۔ اس کی طرف سے تجربہ کار پیوش چاولہ نے سب سے زیادہ 39 رن بنائے۔ ہماچل پردیش کی طرف سے ویبھو اروڑہ نے تین جبکہ پنکج جیسوال اور رشی دھون نے دو دو وکٹ لئے۔ ایک دیگر میچ میں اتراکھنڈ نے مہاراشٹر کو 6 وکٹ سے ہرایا۔ مہاراشٹر نے کیدار جادھو (61 رن) کی نصف سنچری کی مدد سے چار وکٹ پر 141 رن بنائے۔ اتراکھنڈ نے چار وکٹ پر 145 رن بناکر جیت درج کی۔ اس کے لئے جے بسٹا نے ناٹ آوٹ 69 رن بنائے۔
Published by: Nisar Ahmad
First published: Jan 15, 2021 05:59 PM IST