உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    وہ تین خاص لوگ جو دنیا میں کہیں بھی پاسپورٹ کے بغیر جاسکتے ہیں، جانئے کون ہیں؟

    وہ تین خاص لوگ جو دنیا میں کہیں بھی پاسپورٹ کے بغیر جاسکتے ہیں، جانئے کون ہیں؟

    وہ تین خاص لوگ جو دنیا میں کہیں بھی پاسپورٹ کے بغیر جاسکتے ہیں، جانئے کون ہیں؟

    صدر سے لے کر وزیر اعظم بھی جب ایک ملک سے دوسرے ملک میں جاتے ہیں تو انہیں بھی ڈپلومیٹک پاسپورٹ رکھنا ہوتا ہے ، لیکن اس کرہ ارض کے 200 سے زیادہ ممالک میں تین ایسے خاص لوگ بھی ہیں، جو کسی بھی ملک میں بغیر پاسپورٹ کے ہی جاسکتے ہیں ۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Delhi | New Delhi | New Delhi
    • Share this:
      دنیا میں پاسپورٹ سسٹم شروع ہوئے 102 سال ہورہے ہیں ۔ صدر سے لے کر وزیر اعظم بھی جب ایک ملک سے دوسرے ملک میں جاتے ہیں تو انہیں بھی ڈپلومیٹک پاسپورٹ رکھنا ہوتا ہے ، لیکن اس کرہ ارض کے 200 سے زیادہ ممالک میں تین ایسے خاص لوگ بھی ہیں، جو کسی بھی ملک میں بغیر پاسپورٹ کے ہی جاسکتے ہیں، ان سے ان کے پاسپورٹ کے بارے میں کوئی نہیں پوچھتا بلکہ جب یہ کہیں جاتے ہیں تو ان کا اضافہ استقبال کیا جاتا ہے اور پروٹوکول کے مطابق پورا احترام دیا جاتا ہے ۔

      20 ویں صدی کی ہی شروعات سے یہ نظر آنے لگا کہ اگر ایک ملک سے دوسرے ملک میں چوری چھپے آنے والوں پر قابو نہیں پایا گیا تو کئی طرح کی پریشانیاں پیدا ہوسکتی ہیں ۔ دراصل پریشانیاں تو پیدا ہونے بھی لگی تھیں، تب آج ہی طرح پاسپورٹ کے سبھی سیکورٹی فیچرس بھی نہیں تھے کہ فرضی پاسپورٹ کو فورا پہچان لیا جائے ۔

      کون ہیں یہ تین خاص لوگ؟

      اہم بات یہ جانتے ہیں کہ کون سے وہ تین خاص لوگ ہیں، جنہیں دنیا میں کہیں بھی جانے کیلئے پاسپورٹ کی ضرورت نہین ہوتی ۔ یہ خاص لوگ برطانیہ کے بادشاہ اور جاپان کے شہنشاہ اور مہارانی ہیں ۔ چارلس کے کنگ بننے سے پہلے خاص اختیار ملکہ الزابیتھ کے پاس تھا ۔

       

      یہ بھی پڑھئے: 82 سال کی عمر میں دو بیٹوں نے گھر سے نکالا، بیٹیوں نے بھی دیکھ بھال سے کردیا انکار


      جب چارلس برطانیہ کے بادشاہ بنے

      جیسے ہی چارلس برطانیہ کے بادشاہ بنے، تبھی ان کے سکریٹری نے اپنے ملک کی وزارت خارجہ کے ذریعہ سبھی ممالک کے پاس یہ دستاویزی پیغام بھیجا کہ اب برطانیہ کے کنگ چارلس ہیں، لہذا انہیں کہیں بھی پورے اعزاز کے ساتھ آنے جانے کی اجازت دی جائے ۔ اس میں کوئی روک ٹوک نہیں ہو ۔ ساتھ ہی ان کے پروٹوکول کا بھی خاص خیال رکھا جائے ۔

      جاپان کے شہنشاہ اور مہارانی

      اب جانتے ہیں کہ جاپان کے شہنشاہ اور مہارانی کو یہ خاص اختیار کیوں ملا ہے ۔ فی الحال جاپانا کے شہنشاہ ناروہتو ہیں جبکہ ان کی اہلیہ مساکو اووادا جاپان کی مہارانی ہیں ۔ انہوں نے اپنے والد اکیہیتو کے شنہشاہ کا عہدہ چھوڑنے کے بعد یہ سنبھالا ہے ۔ جب تک ان کے والد جاپان کے شہنشاہ تھے، تب تک انہیں اور ان کی اہلیہ کو پاسپورٹ رکھنے کی ضرورت نہیں تھی، لیکن اب انہیں بیرون ملک جانے کی صورت میں ڈپلومیٹک رکھنا ہوگا ۔ 88 سالہ اکیہیتو سال 2019 تک جاپان کے شہنشاہ رہے ۔ اس کے بعد انہوں نے شہنشاہ کے عہدہ سے ریٹائر ہونے کا فیصلہ کیا ۔

       

      یہ بھی پڑھئے: ایئرپورٹ پر مسافروں کو اپنی ایسی تصاویر بھیجنے لگی خاتون، دیکھ کر سبھی کے اڑ گئے ہوش!


      وزیرا عظم اور صدر کیلئے

      دنیا کے سبھی وزیر اعظم اور صدر جب دوسرے ملک میں جاتے ہیں تو انہیں پاسپورٹ رکھنا ہوتا ہے ۔ بس ان کے پاسپورٹ ڈپلومیٹک پاسپورٹ ہوتے ہیں، لیکن انہیں میزبان ملک کے ذریعہ پورا پریویلیج دیا جاتا ہے ۔ انہیں خود ‍ذاتی طور پر امیگریشن حکام کے سامنے پیش نہیں ہونا پڑتا ہے اور سیکورٹی جانچ اور دیگر کارروائیوں سے بھی انہیں چھوٹ ملتی ہے ۔ ہندوستان میں یہ درجہ وزیر اعظم ، صدر جمہوریہ اور نائب صدر کو حاصل ہے ۔

      ہندوستان تین رنگ کے پاسپورٹ جاری کرتا ہے ۔ عام لوگوں کیلئے نیلے رنگ کا پاسپورٹ ، سرکار سے وابستہ اعلی حکام اور وزرا کیلئے آفیشیل پاسپورٹ جبکہ ڈپلومیٹک پاسپورٹ مہرون رنگ کا ہوتا ہے اور یہ ملک میں وزیر اعظم، صدر جمہوریہ اور نائب صدر کو جاری ہوتا ہے۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: