உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    کمپنی دے رہی ہے Mental Health ٹھیک رکھنے کیلئے 11دن کی چھٹی، تفصیل یہاں جانئے

     Mental Health Break: آج لوگ اس کے بارے میں بیدار ہو رہے ہیں۔ دنیا بھر سے مشہور شخصیات بھی اپنے تجربات شیئر کر رہی ہیں اور دماغی ذہنی بیماریوں صحت سے بیدار رہنے کی اپیل کر رہی ہیں۔

    Mental Health Break: آج لوگ اس کے بارے میں بیدار ہو رہے ہیں۔ دنیا بھر سے مشہور شخصیات بھی اپنے تجربات شیئر کر رہی ہیں اور دماغی ذہنی بیماریوں صحت سے بیدار رہنے کی اپیل کر رہی ہیں۔

    Mental Health Break: آج لوگ اس کے بارے میں بیدار ہو رہے ہیں۔ دنیا بھر سے مشہور شخصیات بھی اپنے تجربات شیئر کر رہی ہیں اور دماغی ذہنی بیماریوں صحت سے بیدار رہنے کی اپیل کر رہی ہیں۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Delhi, India
    • Share this:
      Meesho Starts Mental Health Break: آج کی دنیا میں دنیا کی ایک بڑی آبادی جسمانی بیماری کے ساتھ ساتھ ذہنی بیماریوں کا شکار ہے۔ جہاں پہلے دماغی و ذہنی صحت کے بارے میں اتنی کھل کر بات نہیں کی جاتی تھی اور لوگ اسے بیماری ماننے سےبھی انکار کردیتے تھے، آج لوگ اس کے بارے میں بیدار ہو رہے ہیں۔ دنیا بھر سے مشہور شخصیات بھی اپنے تجربات شیئر کر رہی ہیں اور دماغی ذہنی بیماریوں صحت سے بیدار رہنے کی اپیل کر رہی ہیں۔

      جسمانی مسائل کے لیے لوگ دفتر سے چھٹی لے سکتے ہیں لیکن ذہنی بیماری کے لیے چھٹی لینے کا کوئی قانون نہیں ہے۔ اب بھارتی ای کامرس کمپنی میشو اسٹارٹس مینٹل ہیلتھ بریک نے اپنے ملازمین کی ذہنی صحت کو بہتر رکھنے کے لیے ایک خصوصی پالیسی بنائی ہے۔ کمپنی ملازمین کو سال میں 11 دن کی چھٹی دے گی تاکہ وہ اپنے دماغ کو ری سیٹ کر سکیں۔

      سوشل میڈیا کا زیادہ استعمال دماغی صحت کیلئے 'سلو پوائزن' ہے، تحقیق میں بڑا انکشاف

      موت کے خطرے کو کم کر سکتی ہے دو کپ چائے، تحقیق سے ہوا یہ انکشاف

      اکیلے رہ کر خواتین ایسے لیں زندگی کا مزہ، نہیں محسوس ہوگی کسی کی کمی

      موڈ سوئنگ بھی ہو سکتی ہے Suicide کی علامت، جانئے ماہرین کی رائے



      ایک بریک لیں اور اپنے دماغ کو فٹ رکھیں
      آن لائن فیشن اسٹور میشو نے یہ نیا اقدام اٹھایا ہے اور یہ اپنے ملازمین کو صرف ذہنی طور پر چارج کرنے اور تناؤ سے نجات دلانے کے لیے چھٹی دے گا۔ یہ چھٹی 22 اکتوبر 2022 سے یکم نومبر 2022 تک جاری رہے گی۔ کمپنی کی جانب سے کہا گیا ہے- 'آج کل ملازمین کی زندگی میں زیادہ تناؤ اور کام ہے، ایسے میں ری سیٹ اور ریچارج ملازمین کو اول رکھنے کے لیے ایسا طریقہ بنائے گا جسے دوسری کمپنیاں بھی اپنائیں گی۔ کمپنی کے بانی اور چیف ٹیکنالوجی آفیسر سنجیو برنوال نے ٹوئٹر پر اس فیصلے کا اعلان کیا ہے۔
      Published by:Sana Naeem
      First published: