உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    UGC on Har Ghar Tiranga: یوجی سی ہرگھرترنگامہم کےلیےچلائیں شعوری بیداری مہم : حکومت

    ہر گھر ترنگا مہم کے تحت شہریوں سے کہا گیا ہے کہ وہ 13 سے 15 اگست تک اپنے گھروں میں ترنگا لہرائیں۔

    ہر گھر ترنگا مہم کے تحت شہریوں سے کہا گیا ہے کہ وہ 13 سے 15 اگست تک اپنے گھروں میں ترنگا لہرائیں۔

    آزادی کا امرت مہوتسو (Azadi Ka Amrit Mahotsav) کے ایک حصے کے طور پر، ہر گھر ترنگا مہم شروع کی گئی ہے تاکہ شہریوں کو اپنے گھروں پر ہندوستان کا قومی پرچم لہرانے کی ترغیب دی جائے۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • New Delhi | Srinagar | Mumbai | Hyderabad | Pune (Poona) [Poona]
    • Share this:
      یونیورسٹی گرانٹس کمیشن (University Grants Commission) نے پیر کو تمام اعلیٰ تعلیمی اداروں سے طلباء، عملے اور دیگر اسٹیک ہولڈرز میں ’ہر گھر ترنگا‘ مہم  (Har Ghar Tiranga Campaign)  کے بارے میں بیداری پیدا کرنے کو کہا ہے مرکزی حکومت نے ’ہر گھر ترنگا‘ مہم شروع کی ہے جس کے تحت لوگوں کو ہندوستان کی آزادی کے 75 سال مکمل ہونے پر اپنے گھروں پر ترنگا لہرانے کی ترغیب دی جارہی ہے۔

      آزادی کا امرت مہوتسو (Azadi Ka Amrit Mahotsav) کے ایک حصے کے طور پر، ہر گھر ترنگا مہم شروع کی گئی ہے تاکہ شہریوں کو اپنے گھروں پر ہندوستان کا قومی پرچم لہرانے کی ترغیب دی جائے اور اس مہم کے پیچھے کا خیال لوگوں کے دلوں میں حب الوطنی کا جذبہ پیدا کرنا ہے اور ہندوستان اور ان لوگوں کے سفر کو یاد دلاتا ہے جنہوں نے اس عظیم قوم کو بنانے میں اپنا حصہ ڈالا ہے، یو جی سی کے سکریٹری رجنیش جین نے یونیورسٹی کے وائس چانسلروں اور کالجوں کو لکھے ایک خط میں کہا وزارت ثقافت نے ایک ویب سائٹ تیار کی ہے — www.harghartiranga.com —شہریوں کو جھنڈا لگانے اور ترنگے کے ساتھ سیلفی اپ لوڈ کرنے کی ترغیب دی جاتی ہے۔

      یہ بھی پڈھیں:Chenab Bridge: جموں و کشمیر میں دنیا کے بلند ترین ریلوے پل کا اوورارک ڈیک تکمیل کے قریب
       تمام اعلیٰ تعلیمی اداروں سے درخواست کی جاتی ہے کہ وہ طلباء، فیکلٹی، عملہ اور دیگر اسٹیک ہولڈرز میں ویب سائٹ کے بارے میں بیداری پیدا کریں اور سوشل میڈیا پروموشنز کے لیے آفیشل ہیش ٹیگ #harghartiranga استعمال کریں۔



      جین نے کہا، "13-15 اگست کے آزادی ہفتہ کے دوران شہریوں کی زیادہ سے زیادہ تعداد میں ان کے گھروں پر ترنگا لہرانے کی کوششیں بھی کی جا سکتی ہیں۔
      Published by:Mudasir Mir
      First published: