உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    OMG! پارٹی میں گئے شخص کے پرائیویٹ پارٹ میں دوستوں نے ڈال دیا اسٹیل کا گلاس، پھر جو ہوا، جان کر اڑ جائیں گے ہوش!

    OMG! پارٹی میں گئے شخص کے پرائیویٹ پارٹ میں دوستوں نے ڈال دیا اسٹیل کا گلاس، پھر جو ہوا، جان کر اڑ جائیں گے ہوش!

    OMG! پارٹی میں گئے شخص کے پرائیویٹ پارٹ میں دوستوں نے ڈال دیا اسٹیل کا گلاس، پھر جو ہوا، جان کر اڑ جائیں گے ہوش!

    Surgery, Odisha, Intestine, Glass in Private Part: اوڈیشہ کے برہم پور میں ایک پارٹی کے دوران کچھ دوستوں نے اپنے ایک دوست کو شراب پلائی اور پھر اس کے پرائیویٹ پارٹ میں اسٹیل کا گلاس ڈال دیا ۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Odisha (Orissa) | Gujarat
    • Share this:
      نئی دہلی : دوستی کے آپ نے کافی سارے قصے سنے ہوں گے ، لیکن اس وقت دوستی کا ایک ایسا قصہ اوڈیشہ سے سامنے آیا ہے ، جس نے سبھی کو حیران کردیا ہے ۔ کوئی اس بات کا اندازہ بھی نہیں لگا سکتا کہ دوست ہی اپنے دوست کے ساتھ کیا کیا کرسکتے ہیں ۔ دراصل اوڈیشہ کے برہم پور میں ایک پارٹی کے دوران کچھ دوستوں نے اپنے ایک دوست کو شراب پلائی اور پھر اس کے پرائیویٹ پارٹ میں اسٹیل کا گلاس ڈال دیا ۔

      میڈیا رپورٹس کے مطابق گجرات کے کرشنا راوت (45) تقریبا دس دن پہلے اپنے دوستوں کے ساتھ پارٹی کرنے اوڈیشہ گئے ہوئے تھے ، وہاں دوستوں نے کرشنا راوت کو شراب پلائی اور پھر نشے کی حالت میں اس کے پرائیویٹ پارٹ کے اندر گلاس ڈال دیا ۔ دوستوں کی یہ خطرناک حرکت اس وقت سوشل میڈیا پر کافی تیزی سے وائرل ہورہی ہے ۔

       

      یہ بھی پڑھئے: تنتر منتر کے چکر میں خاتون کے پستان اور پرائیویٹ پارٹ کو کاٹا، پھر کیا ایسا خوفناک کام، پانچ گرفتار


      راوت کو پارٹی کے اگلے دن ہی پیٹ میں درد ہونے لگا تو وہ اوڈیشہ سے سورت چلے آئے ، لیکن دھیرے دھیرے درد بڑھتا گیا جو کہ ان کیلئے ناقابل برداشت ہوگیا ۔ اس کے بعد کرشنا راوت اپنے گاوں گنجم چلے گئے ۔ گاوں پہنچنے کے بعد پیٹ میں سوجن آنے لگی اور قضائے حاجت میں بھی پریشانی ہورہی تھی ۔

       

      یہ بھی پڑھئے: چار سال کے بچے کو کاٹتے ہی زہریلے کوبرا کی تڑپ تڑپ کر موت، معصوم پوری طرح صحتمند


      پریشانی بڑھنے کے بعد لوگوں کے مشورہ پر کرشنا ، ایم کے سی جی میڈیکل کالج اور اسپتال میں جانچ کیلئے گئے ۔ ڈاکٹرس کی ٹیم نے جب ان کی جانچ کی تو ان کے ہوش اڑ گئے ۔ انہوں نے اسکیننگ میں پایا کہ ان کی آنت میں گلاس چلا گیا ہے، جس سے انہیں ناقابل برداشت درد ہورہا ہے ۔

      اسپتال کے سرجری محکمہ کے پروفیسر چرن پانڈے کے مشورہ پر اسسٹنٹ پروفیسر سنجیت کمار نائک، ڈاکٹر ستیہ سوروپ ، ڈاکٹر سبرت برال اور ڈاکٹر پرتیبھا سمیت ایکسپرٹ کی ایک ٹیم نے کرشنا راوت کی سرجری کی ۔ انہوں نے آنت کو کاٹ کر اسٹیل کے گلاس کو ان کے جسم سے باہر نکالا ۔ اب کرشنا کی حالت بہتر ہے۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: