உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    بیٹے اور اس کی معشوقہ کے پرائیویٹ لمحات نے چھین لیا پڑوسیوں کا سکون! ماں پر لگا 27000 روپے کا جرمانہ، جانئے پورا معاملہ

    بیٹے اور اس کی معشوقہ کے پرائیویٹ لمحات نے چھین لیا پڑوسیوں کا سکون! ماں پر لگا 27000 روپے کا جرمانہ، جانئے پورا معاملہ ۔ علامتی تصویر ۔

    بیٹے اور اس کی معشوقہ کے پرائیویٹ لمحات نے چھین لیا پڑوسیوں کا سکون! ماں پر لگا 27000 روپے کا جرمانہ، جانئے پورا معاملہ ۔ علامتی تصویر ۔

    ویلس کے شہر وریکس ہیم کی رہنے والی 41 سال کی کرسٹین مارگن مشکل میں پڑ گئی ہیں ۔ ان کے پڑوسیوں نے انتظامیہ سے ان کی شکایت کی ہے کہ ان کے گھر سے کسی جوڑے کے رومانس کی آوازیں بہت زور زور سے آتی ہیں ، جس نے ان کی نیند اور سکون سب کچھ چھین لیا ہے ۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • inter, Indiavallesvalles
    • Share this:
      اکثر لوگوں کو ایسا لگتا ہے کہ وہ اپنے ذاتی گھر میں ، اپنے بیڈ روم کے اندر کچھ بھی کرسکتے ہیں اور اس سے کسی کو فرق نہیں پڑنا چاہئے ۔ کچھ حد تو یہ ٹھیک بھی ہے، مگر جب دوسروں کو آپ کے ذریعہ کئے گئے کام سے پریشانی ہونے لگتی ہے تو یہ آپ کی ذمہ داری ہے کہ چہار دیواری کے اندر بھی آپ اپنے ایکشن پر دھیان دیں ۔ اگر ایسا نہیں کیا گیا تو مشکلات بڑھ سکتی ہیں، جیسے ویلس کی رہنے والی ایک خاتون کی اس وقت بڑھ گئی، جب اس کے پڑوسیوں نے اس پر کیس کردیا اور اب اس کو جرمانہ کے طور پر 27 ہزار روپے ادا کرنے پڑیں گے ۔

      ویلس کے شہر وریکس ہیم کی رہنے والی 41 سال کی کرسٹین مارگن مشکل میں پڑ گئی ہیں ۔ ان کے پڑوسیوں نے انتظامیہ سے ان کی شکایت کی ہے کہ ان کے گھر سے کسی جوڑے کے رومانس کی آوازیں بہت زور زور سے آتی ہیں ، جس نے ان کی نیند اور سکون سب کچھ چھین لیا ہے ۔ پڑوسیوں نے جب اس معاملہ کی کئی مرتبہ شکایت کی، تب انتظامیہ نے ان کے خلاف ایکشن لیا ۔

       

      یہ بھی پڑھئے : قسمت کا کمال! قرض کیلئے کاٹ رہا تھا بینک کے چکر، لگ گئی 25 کروڑ کی لاٹری


      کرسٹین اپنی سن رسیدہ باپ ، 23 سال کے بیٹے اور ایک بیٹی کے ساتھ رہتی ہیں، جو 20 سال سے کم عمر کی ہے ۔ Wrexham County Borough Council میں اس معاملہ کی سماعت ہوئی، جہاں کورٹ کی جانب سے کرسٹین پر 27 ہزار روپے کا جرمانہ لگایا گیا ۔ تب کرسٹین نے کورٹ میں بتایا کہ ان آوازوں کا ذمہ دار اس کا بیٹا اور اس کی گرل فرینڈ ہے ۔ کورٹ نے تسلیم کیا کہ کرسٹین نائٹ شفٹ کرتی ہیں، اس لئے وہ آوازیں ان کی نہیں ہوسکتیں، مگر پڑوسیوں نے شکایت کی ہے کہ آوازیں ان کے ہی گھر سے آتی ہیں جو رومانٹک لمحات کی ہوتی ہیں ۔

       

      یہ بھی پڑھئے : 43 سالوں میں 53 مرتبہ شخص نے کی شادی، غیر ملکی خواتین کو بھی بنا چکا ہے بیوی!


      پڑوسیوں نے کہا کہ ان آوازوں کی وجہ سے وہ سو نہیں پا رہے ہیں ۔ آوازیں سب سے زیادہ دیر رات آتی ہیں یا پھر علی الصبح آتی ہیں ۔ پڑوسیوں نے انتظامیہ سے پہلی مرتبہ آواز آنے کی شکایت جولائی 2020 میں کی تھی جب کرسٹین کے گھر کافی تیز آواز میں پارٹی ہورہی تھی ۔ اس کے بعد پرائیویٹ لمحات کی آوازیں پچھلے سال کرسمس کے وقت سے زیادہ بڑھ گئی ہیں ۔

      کورٹ نے انہیں پھٹکا لگاتے ہوئے کہا کہ بھلے ہی وہ خود ذاتی طور پر اس کیلئے ذمہ دار نہیں ہیں، مگر انہیں اس بات کو دیکھنا چاہئے تھا کہ ان کے اہل خانہ کے کسی رکن کی وجہ سے کوئی پڑوسی پریشان نہ ہو ۔ انتظامیہ کی جانب سے پڑوسیوں کے گھر کے باہر آواز ریکارڈ کرنے کیلئے نوائز مانیٹر لگایا گیا تھا، جس سے پتہ چلتا ہے کہ آوازیں جسمانی تعلقات بناتے وقت کی ہیں ۔ ان آوازوں سے پڑوسی اپنے ہی گھر میں خوشی سے نہیں رہ پا رہے ہیں اور کئی مرتبہ انہیں شرمندہ بھی ہونا پڑتا ہے ۔ کرسٹین کے بیٹے پر بھی ماحولیات کے تحفظ سے متعلق قانون کے تحت چار معاملات درج کئے گئے ہیں ، جس کی سماعت اگلے مہینے ہوگی ۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: