உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    ایئرپورٹ پر مسافروں کو اپنی ایسی تصاویر بھیجنے لگی خاتون، دیکھ کر سبھی کے اڑ گئے ہوش!

    ایئرپورٹ پر مسافروں کو اپنی ایسی تصاویر بھیجنے لگی خاتون، دیکھ کر سبھی کے اڑ گئے ہوش! تصویر : alaskaclarke_/Instagram

    ایئرپورٹ پر مسافروں کو اپنی ایسی تصاویر بھیجنے لگی خاتون، دیکھ کر سبھی کے اڑ گئے ہوش! تصویر : alaskaclarke_/Instagram

    الاسکا نے ویڈیو میں کہا کہ وہ اپنی فلائٹ میں چڑھنے کا انتظار کررہی تھی جب اس نے ایئرپورٹ پر موجود انجان لوگوں کو فون پر اپنی فحش تصاویر بھیجنی شروع کردی ۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • inter, Indialondonlondonlondonlondon
    • Share this:
      اکثر لوگوں کو لگتا ہے کہ وہ اپنے حساب سے کسی سے کچھ بھی مذاق کرسکتے ہیں ۔ پھر وہ دوسروں کے جذبات کے بارے میں بھی نہیں سوچتے ہیں ، مگر ایسا کرنا کئی مرتبہ انہیں مشکل میں ڈال دیتا ہے ۔ ایسا ہی ایک خاتون کے ساتھ بھی ہوا جو ایئرپورٹ پر موجود انجان لوگوں کو اپنی فحش تصاویر بھیجنے لگی ۔ جب اس نے اپنی اس حرکت کے بارے میں سوشل میڈیا پر لوگوں کو بتایا تو اس کی جم کر تنقید ہوئی ۔

       

      یہ بھی پڑھئے: بیٹے اور اس کی معشوقہ کے پرائیویٹ لمحات نے چھین لیا پڑوسیوں کا سکون!


      ڈیلی اسٹار نیوز ویب سائٹ کے مطابق الاسکا کلارک نام کی خاتون ایک ایڈلٹ کنٹینٹ کرئیٹر ہے اور ایڈلٹ سبسکرپشن سائٹ آنلی فینس پر اپنی پرائیویٹ تصاویر اور ویڈیوز بیچتی ہے ۔ رپورٹ کے مطابق حال ہی میں الاسکا نے سوشل میڈیا سائٹ ٹک ٹاک پر ایک ویڈیو پوسٹ کرکے دکھایا کہ وہ کیسے ایئر پورٹ پر انجان لوگوں کو اپنی فحش تصاویر بھیج رہی ہے ۔

       

      یہ بھی پڑھئے: 43 سالوں میں 53 مرتبہ شخص نے کی شادی، غیر ملکی خواتین کو بھی بنا چکا ہے بیوی!


      الاسکا نے ویڈیو میں کہا کہ وہ اپنی فلائٹ میں چڑھنے کا انتظار کررہی تھی جب اس نے ایئرپورٹ پر موجود انجان لوگوں کو فون پر اپنی فحش تصاویر بھیجنی شروع کردی ۔ خاتون نے بتایا کہ ایئرڈراپ کے ذریعہ انجان لوگوں کو اپنی فحش تصاویر بھیجی رہی ہوں ۔ بتادیں کہ ایئر ڈراپ آئی فون کا ایک فیچر ہے، جو بلیوٹوتھ کی طرح کام کرتا ہے ۔ اس تکنیک کے ذریعہ ایک آئی فون مالک دوسرے کو انٹرنیٹ کے بغیر تصاویر اور ویڈیوز بھیج سکتا ہے ۔ صرف دوسرے شخص کے فون میں بھی ایئرڈراپ آن ہونا چاہئے ۔ دوسرے کے پاس ایکسیپٹ یا ڈکلائن کرنے کا آپشن ہوتا ہے۔

      خاتون نے یہ حرکت مذاق میں کی تھی اور اس کو لگا تھا کہ لوگ بھی ہنسی میں اڑا دیں گے، مگر رپورٹ کے مطابق لوگ اس کی تنقید کرنے لگے ۔ ایک نے کہا کہ یہ مذاق نہیں ، جنسی استحصال ہے۔ جبکہ ایک نے کہا کہ ایئرپورٹ پر فون بچوں یا پھر شادی شدہ لوگوں کے پاس رہا ہوگا، ایسے میں اگر انہوں نے تصاویر کو ایکسیپٹ کرلیا ہوگا تو ان کو کتنی شرمندگی محسوس ہوئی ہوگی ۔ ایک نے کہا کہ یہ کام غیر قانونی ہے ۔ ایک نے پوچھا کہ اب الاسکا کو ان حرکتوں سے شرمندگی نہیں ہوتی ہے؟
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: