جموں کشمیرکےٹنگڈارمیں پاکستان نےکی سیز فائرمعاہدے کی خلاف ورزی۔2فوجی جوان شہید۔ایک عام شہری ہلاک

جموں کشمیرکے ضلع کپواڑہ میں پاکستان نےسیزفائرمعاہدےکی خلاف ورزی کی۔ٹنگڈھار سیکٹرمیں بلااشتعال فائرنگ کی۔جس میں دوفوجی جوان شہید ہوگئے۔وہیں ایک عام شہری بھی ہلاک ہوگیا۔

Oct 20, 2019 11:29 AM IST | Updated on: Oct 20, 2019 03:36 PM IST
جموں کشمیرکےٹنگڈارمیں پاکستان نےکی سیز فائرمعاہدے کی خلاف ورزی۔2فوجی جوان شہید۔ایک عام شہری ہلاک

فائل فوٹو

جموں کشمیرکے ضلع کپواڑہ میں پاکستان نےسیزفائرمعاہدےکی خلاف ورزی کی۔ٹنگڈھار سیکٹرمیں بلااشتعال فائرنگ کی۔جس میں دوفوجی جوان شہید ہوگئے۔وہیں ایک عام شہری بھی ہلاک ہوگیا۔آپ کوبتادیں کہ بیتی شب پاکستان نے بلا اشتعال فائرنگ کرکے تباہی مچائی تھی۔پاکستان نے ہندوستانی چوکیوں پر فائرنگ کی۔فائرنگ کی زد میں آکر تین عام شہری بھی زخمی ہوئے ہیں۔وہیں درجنوں مکانوں کونقصان پہنچا ہے ۔

صبح سے ہی پاکستان کی طرف سے سیز فائر کی خلاف ورزی پر فائرنگ کی جارہی ہے ، جس میں ہندوستان فوج کے چوکیوں اور رہائشی علاقوں کو نشانہ بنایا گیا۔ ہندوستانی سیکیورٹی فورسز بھی پاکستان کی جانب سے کی جارہی فائرنگ کا منہ توڑ جواب دے رہی ہیں۔ تفصیلات کے مطابق ، جموں و کشمیر کے تنگدھار میں جنگ بندی کی خلاف ورزی پر پاکستان نے ایک بار پھر فائرنگ شروع کردی ہے۔بتایاجارہاہے کہ پاکستان سے رہائشی علاقوں کو بھی نشانہ بنایا جارہا ہے۔ اس فائرنگ میں ایک عام شخص کو بھی گولی ماری گئی۔ زخمی شخص کو فوری طور پر قریبی اسپتال میں داخل کرایا گیا، جہاں علاج کے دوران اس کی موت ہوگئی۔ پاکستان کی جانب سے کی جارہی فائرنگ سے علاقے کے لوگوں میں خوف و ہراس کا ماحول دیکھاجارہاہے۔ اسی دوران ، پاکستانی فوج نے اتوار کی صبح بھی بھارتی فوج کی پوسٹوں کو نشانہ بنایا۔ اس حملے میں2 ہندوستانی فوجی ہلاک ہوگئے تھے۔ ہندوستانی سیکیورٹی فورسز پاکستان کی فائرنگ کا مستقل جواب دے رہی ہیں۔

Loading...

 

رہائشی علاقے کوپہنچ رہاہے نقصان

جموں کشمیرکےہیرنگرسیکٹرمیں پاکستان کی جانب سےتقریباً ایک مہینے سےسیز فائرمعاہدے کی خلاف ورزی کی جارہی ہے۔رہائشی علاقوں کومستقل نشانہ بنایاجارہاہے۔جس سے لوگوں میں دہشت کاماحول ہے۔بیتی رات پاکستان نےرہائشی علاقے کونشانہ جس سےعلاقےکوکافی نقصان ہوا۔

 دراندازی کی کوششیں تیز

انٹلیجنس رپورٹ میں یہ بات واضح ہوگئی ہے کہ پاکستان فوج کی جانب سے کچھ اضافی نقل و حرکت بھی گریزسیکٹر کے دوسری طرف دیکھی گئی ہے۔ پاکستانی فوج ، ہندوستانی فوج کو سیز فائر کی خلاف ورزی کرتے ہوئے پریشان کرنے کا منصوبہ رکھتی ہے۔ تاکہ دراندازی کی کوششیں تیزکی جاسکیں۔ بتایاجارہاہے کہ پاکستانی فوج دہشت گردوں کونئی ٹکنالوجی سے تربیت بھی دے رہی ہے۔ جس سے دہشت گردہندوستان فوج سے بچنے کے لئے استعمال کرتے ہیں۔ منی مرگ ، کامری ، ڈومل اور گلتری ان مقامات میں شامل ہیں جہاں شمالی کشمیرمیں گریز سیکٹر میں پاکستانی فوج کی ہلچل شدت اختیار کرچکی ہے۔

Loading...