نیشنل کانفرنس کے لیڈر کا متنازعہ بیان، وزیر اعظم مودی کو لےکر کہی ایسی بات

نیشنل کانفرنس کے لیڈر جاوید احمد رانا نے جموں و کشمیر کے پونچھ میں وزیر اعظم مودی کو لے کر ایک متنازعہ بین دیا ہے۔

Mar 28, 2019 01:16 PM IST | Updated on: Mar 28, 2019 01:51 PM IST
نیشنل کانفرنس کے لیڈر کا متنازعہ بیان، وزیر اعظم مودی کو لےکر کہی ایسی بات

نیشنل کانفرنس کے لیڈر جاوید احمد رانا نے جموں و کشمیر کے پونچھ میں وزیر اعظم مودی کو لے کر ایک متنازعہ بین دیا ہے۔ بدھ کے روز ایک انتخابی اجلاس کے دورن جاوید احمد رانا نے کہا کہ اگر ان کے پاس پاور آجائےتو وہ قتل کے الزام میں وزیر اعظم کو جیل میں ڈال دیں گے۔

جاوید احمد رانا نے کہا، ’’ خدا کی قسم اگر میرا بس چلے، تو میں اس ملک کے وزیر اعظم کے خلاف، جتنے بھی قتل ہوئے ہیں جموں و کشمیر میں اور اس ملک میں، میں اس کو قتل کے کیس میں ٹھوک دوں گا‘‘۔

Loading...

رانا نے وزیراعظم مودی کے علاوہ میڈیا پر بھی حملہ بولا۔ انہوں نے کہا، ’’ دوسرا قاتل کون ہے؟ ملک کی میڈیا۔ اللہ کی قسم کھا کر کہتا ہوں کہ اگر مجھے پاؤر ملے، طاقت ملے تو میں ملک کے وزیر اعظم کو جیل میں بھیج دوں اور جو یہ میڈیا ملک میں ایک کمیونٹی کے خلاف نفرت پھیلا رہی ہے میں ان سب کو اندر ٹھوکوں اور دکھاوں کی لیڈرشپ کیا ہوتی ہے‘‘۔

بتا دیں کہ نیشنل کانفرنس کے لیڈر اس سے پہلے ہندوستانی فوج کے خلاف دئے گئے بیان کو لےکر بھی خبروں میں آئے تھے۔ اس کے ساتھ گزشتہ سال مئی میں انہوں نے کہا تھا کہ پتھربازیوں کو مودی حکومت اور آر ایس ایس کے ذریعہ پیسہ دیا جا رہا ہے۔

Loading...