پاکستان نے ایل او سی کی طرف بھیجے 2000 فوجی ، ہندوستانی فوج کی قریبی نظر : ذرائع

کشمیر کے معاملہ کو لے کر جاری کشیدگی کے درمیان خبر ہے کہ پاکستانی فوج نے اپنے ایک بریگیڈ کو پی او کے میں لائن آف کنٹرول کے نزدیک باغ اور کوٹلی سیکٹر میں بھیجا ہے ۔

Sep 05, 2019 03:24 PM IST | Updated on: Sep 05, 2019 03:24 PM IST
پاکستان نے ایل او سی کی طرف بھیجے 2000 فوجی ، ہندوستانی فوج کی قریبی نظر : ذرائع

پاکستان نے ایل او سی کی طرف بھیجے 2000 فوجی ، ہندوستانی فوج کی قریبی نظر : ذرائع

کشمیر کے معاملہ کو لے کر جاری کشیدگی کے درمیان خبر ہے کہ پاکستانی فوج نے اپنے ایک بریگیڈ کو پی او کے میں لائن آف کنٹرول کے نزدیک باغ اور کوٹلی سیکٹر میں بھیجا ہے ۔ ہندوستانی فوج کے ذرائع کے مطابق پرامن مقامات سے سرحد کی طرف بھیجے گئے فوجی فی الحال ایل او سی سے تقریبا 30 کلو میٹر دور تعینات ہیں ۔ ذرائع کے مطابق فی الحال انہیں جارحانہ کارروائی کیلئے تعینات نہیں کیا گیا ہے ۔ حالانکہ ہندوستانی فوج ان کی حرکتوں پر گہری نظر رکھے ہوئے ۔

پاکستانی فوج کے ذریعہ لائن آف کنٹرول کی طرف بھیجے گئے فوجیوں کی تعداد تقریبا دو ہزار بتائی جارہی ہے ، جو ایک بریگیڈ کے مساوی ہے ۔ جوانوں کی یہ نقل و حمل ایسے وقت میں ہوئی ہے ، جب پاکستان پہلے ہی اپنی دہشت گرد تنظیموں کو سرگرم کرچکا ہے اور دہشت گرد تنظیم لشکر طیبہ اور جیش محمد نے مقامی لوگوں اور افغانوں کی بھرتی بھی شروع کردی ہے ۔

Loading...

جموں و کشمیر کو خصوصی درجہ دینے والے آرٹیکل 370 کو ختم کئے جانے کے بعد سے پاکستان ایل او سی پر 100 سے زیادہ ایس ایس جی کمانڈو تعینات کرچکا ہے ۔ اس کے ساتھ ہی کشمیر میں تشدد پھیلانے کے مقصد سے دہشت گردوں کو داخل کرانے کی بھی کوشش کررہا ہے ۔

وہیں پاکستان کی جانب سے کی گئی جنگ بندی کی خلاف ورزی کے بعد ہندوستان کی جوابی کارروائی میں 10 سے زیادہ ایس ایس جی جوان مار گرائے گئے ہیں ۔ بتادیں کہ پاکستان نے گجرات کے سامنے سرکریک خطہ میں بھی اپنے خصوصی دستہ کو تعینات کیا ہے ۔

ذرائع نے کہا کہ پاکستان کی ایجنسیاں بھی ہندوستانی سیکورٹی فورسیز پر حملے کیلئے افغان دہشت گردوں کی بھرتی کررہی ہیں ۔ ذرائع کے مطابق کشمیری دہشت گردوں کی جگہ افغانوں کو بھرتی کیا جارہا ہے ۔

Loading...