حیدرآباد میں 100 سال کی سب سے زیادہ بارش ریکارڈ ، یہ علاقے رہے زیادہ متاثر

حیدرآباد میں ماہ ستمبر میں منگل کی شب 100 سال میں سب سے زیادہ بارش ریکارڈ کی گئی ہے۔ حیدرآباد اور سکندرآباد میں شام 4 تا 11 بجے شب جاری رہی شدید بارش کی وجہ سے کئی علاقوں کی سڑکوں پر پانی جمع ہوگیا۔

Sep 25, 2019 09:20 PM IST | Updated on: Sep 25, 2019 09:20 PM IST
حیدرآباد میں 100 سال کی سب سے زیادہ بارش ریکارڈ ، یہ علاقے رہے زیادہ متاثر

فائل فوٹو

حیدرآباد میں ماہ ستمبر میں منگل کی شب 100 سال میں سب سے زیادہ بارش ریکارڈ کی گئی ہے۔ حیدرآباد اور سکندرآباد میں شام 4 تا 11 بجے شب جاری رہی شدید بارش کی وجہ سے کئی علاقوں کی سڑکوں پر پانی جمع ہوگیا۔ دونوں شہروں کے بیشتر علاقوں میں زائد از10 سینٹی میٹر بارش ریکارڈ کی گئی اور کئی نشیبی علاقوں میں پانی داخل ہوگیا۔ بارش کی وجہ سے مختلف علاقوں میں ٹریفک کی آمدورفت بھی متاثر رہی۔

گریٹر حیدرآباد میونسپل کارپوریشن کی ایمرجنسی ٹیموں نے ریلیف کام انجام دیئے۔ اس دوران موصولہ اطلاع میں بتایا گیا کہ تلنگانہ میں جنوب مغربی مانسون نے شدت اختیار کرلی ہے اور گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران یہ ساحلی آندھراپردیش ، یانم اور رائل سیما میں سرگرم رہا۔

Loading...

محکمہ موسمیات کی جانب سے جاری کردہ ایک بلیٹن میں بتایا گیا کہ منگل کی شب تلنگانہ کے اضلاع بھدرادری، کتہ گوڑم ، میڑچل ، ملکاجگری ، کومرم بھیم ،  پداپلی ، رنگاریڈی ، کریم نگر ،  میدک ، محبوب نگر ، ورنگل رورل ،  یادادری بھونگیر ، سدی پیٹ ، جنگاوں ، منچریال اور نظام آباد میں کہیں کہیں زبردست بارش ہوئی ۔ ساحلی آندھراپردیش کے اضلاع سریکاکلم ،  وشاکھاپٹنم ،  مشرقی گوداوری اور کرشنا کے چند مقامات پر بھی شدید بارش کی اطلاعات موصول ہوئی ہیں ۔ بدھ کو صبح کی اولین ساعتوں میں ناگول کے قریب آدرش نگر میں ایک کھلے نالہ میں اتفاقی طور پر گرجانے کے سبب ایک شخص کی موت ہوگئی۔

Loading...