بغیر ضرورت تین طلاق پر قانون بنانا چاہتی ہے حکومت: مفتی رضوان تاراپوری

پریس کو خطاب کرتے ہوئے ملی كونسل کے گجرات یونٹ صدر مفتی رضوان تاراپوری نے کہا کہ آج شریعت میں مرکزی حکومت مداخلت کر رہی ہے۔

Jan 02, 2018 08:49 PM IST | Updated on: Jan 02, 2018 08:49 PM IST
بغیر ضرورت تین طلاق پر قانون بنانا چاہتی ہے حکومت: مفتی رضوان تاراپوری

 احمد آباد۔ لوک سبھا میں تین طلاق کا بل پاس ہو چکا ہے۔ تین طلاق کے مسئلہ کو لیکر مسلم برادری کے لوگ اپنے اپنے طریقے سے مخالفت کر رہے ہیں۔ اس سلسلہ میں آج آل انڈیا ملی كونسل کی جانب سےایک اجلاس کا انعقاد کیا گیا۔  پریس کو خطاب کرتے ہوئے ملی كونسل کے گجرات یونٹ صدر مفتی رضوان تاراپوری نے کہا کہ آج شریعت میں مرکزی حکومت مداخلت کر رہی ہے۔ اگرحکومت ایسا بل لانا چاہتی ہے تو حکومت کو پہلے مذہبی دانشوران سے بات چیت کرنی چاہئے۔  اگر حکومت ہماری رائے کو نہیں مانتی تو ایسا مانا جائے گا کہ حکومت صرف اورصرف مسلمانوں کو نشانہ بنانےکے لئےاورسیاسی فوائد کے لئے ایسے بل پاس کروا رہی ہے۔

وہیں میڈیا سےخطاب کرتے ہوئے آل انڈیا مسلم پرسنل لاء بورڈ کےممبر مولانا مصطفی رفائی نے کہا کہ ہم نے آج اس بل کو لے کر کافی بحث کی اور پایا کہ اس کی کوئی ضروت ہی نہیں۔ انہوں نے کہا کہ ہم راجیہ سبھا کے تمام ارکان سےاپیل کرتے ہیں کہ وہ اس بل کی کھلےطور پرمخالفت کریں کیونکہ یہ مذہبی معاملہ ہے ۔

Loading...

Loading...
Listen to the latest songs, only on JioSaavn.com