ہوم » ویڈیو » وسطی ہندوستان

آٹو رکشہ کو ایمبولینس بنانے پر کارروائی، مریض کو لے جاتے وقت پولیس نے روکا راستہ اور کہا یہ غیر قانونی ہے

کورونا قہر میں بیوی کے زیور بیچ کر عوام کی بھلائی کرنے والے جاوید کے خلاف بھوپال پولیس نے کاروائی کی ہے۔پولیس کا کہنا ہے کہ جاوید نے بغیر اجازت کے آٹومیں آکسیجن سلینڈررکھ کر ایمبولنس بنایا ہے جو غیر قانونی ہے ۔ بتادیں کہ بھوپال کے رہنے و الے جاوید نے مریضوں کی مدد کےلئے اپنے آٹو کو ایمبولینس میں تبدیل کردیا ہے۔ جاویدآٹو میں آکسیجن رکھ کر مریضوں کی مفت خدمت کررہے ہیں۔اس کے علاوہ انہوں نے آٹومیں وائرس سے بچنے کےلئے پلاسٹک شیٹ بھی لگائی ہے اور سنیٹائزر کا بھی انتظام کیا ہے۔ جاوید یہ کام بلا لحاذ مذہب و ملت انجام دے رہے اور انہوں نے آکسیجن کا انتظام کرنے کےلئے اپنی بیوی کے زیور تک بیچ دئے۔ ان کا کہنا کہ کورونا کے اس دور میں لوگوں کی مدد کرنا ہی سب بڑی انسانیت ہے۔

وسطی ہندوستان| News18 Urdu | May 01, 2021 10:32 PM IST

کورونا قہر میں بیوی کے زیور بیچ کر عوام کی بھلائی کرنے والے جاوید کے خلاف بھوپال پولیس نے کاروائی کی ہے۔پولیس کا کہنا ہے کہ جاوید نے بغیر اجازت کے آٹومیں آکسیجن سلینڈررکھ کر ایمبولنس بنایا ہے جو غیر قانونی ہے ۔ بتادیں کہ بھوپال کے رہنے و الے جاوید نے مریضوں کی مدد کےلئے اپنے آٹو کو ایمبولینس میں تبدیل کردیا ہے۔ جاویدآٹو میں آکسیجن رکھ کر مریضوں کی مفت خدمت کررہے ہیں۔اس کے علاوہ انہوں نے آٹومیں وائرس سے بچنے کےلئے پلاسٹک شیٹ بھی لگائی ہے اور سنیٹائزر کا بھی انتظام کیا ہے۔ جاوید یہ کام بلا لحاذ مذہب و ملت انجام دے رہے اور انہوں نے آکسیجن کا انتظام کرنے کےلئے اپنی بیوی کے زیور تک بیچ دئے۔ ان کا کہنا کہ کورونا کے اس دور میں لوگوں کی مدد کرنا ہی سب بڑی انسانیت ہے۔

براہ راست ٹی وی تازہ ترین