ہوم » ویڈیو » جموں وکشمیر

شوپیاں میں میونسپل کونسل کی طرف سے بڑی گاڑیوں کو لوٹنے کا سلسلہ کئی برسوں سے جاری

شوپیاں ضلع میں میونسپل کونسل کی طرف سے بڑی گاڑیوں کو لوٹنے کا سلسلہ کئی برسوں سے جاری ہے ۔اس پر ٹرک ڈرائیوروں، سیول و سماجی جماعتوں نے غصہ کا اظہار کرتے ہوئے ضلع انتظامیہ سے مداخلت کی اپیل کی ہے۔ شرمال گاؤں میں کونسل کی جانب سےایک اینٹری پوائنٹ بنایا گیا ۔یہاں ڈرائیوروں سے میونسپل حدود میں داخل ہونے پر دو سو روپیہ وصول کئے جاتے ہیں۔ تعجب کی بات یہ ہے یہ گاڑیاں میونسپل کونسل کے احاطے میں داخل ہی نہیں ہوتی ہیں۔ اس اینٹری پوائنٹ سے قریب ایک کلومیٹر دوری پر کونسل کا علاقہ شروع ہوتا ہے۔ ڈرائیوروں کا کہنا ہے کہ انہیں کچھ ہی میٹر کے فاصلے پر پانچ سو روپیہ فیس دینی پڑتی ہے اور پارکنگ کے لئے جگہ بھی نہیں ہے۔ادھر میونسپل حکام نے کہا کہ سات برس قبل ٹریفک جام کو مدنظر رکھتے ہوئے یہ فیصلہ کیا گیا تھا۔انہوں نے ایک دو ماہ میں انٹری پوائنٹ ہٹانے کی بات کہی ۔

جموں وکشمیر| News18 Urdu | Nov 27, 2021 10:08 PM IST

شوپیاں ضلع میں میونسپل کونسل کی طرف سے بڑی گاڑیوں کو لوٹنے کا سلسلہ کئی برسوں سے جاری ہے ۔اس پر ٹرک ڈرائیوروں، سیول و سماجی جماعتوں نے غصہ کا اظہار کرتے ہوئے ضلع انتظامیہ سے مداخلت کی اپیل کی ہے۔ شرمال گاؤں میں کونسل کی جانب سےایک اینٹری پوائنٹ بنایا گیا ۔یہاں ڈرائیوروں سے میونسپل حدود میں داخل ہونے پر دو سو روپیہ وصول کئے جاتے ہیں۔ تعجب کی بات یہ ہے یہ گاڑیاں میونسپل کونسل کے احاطے میں داخل ہی نہیں ہوتی ہیں۔ اس اینٹری پوائنٹ سے قریب ایک کلومیٹر دوری پر کونسل کا علاقہ شروع ہوتا ہے۔ ڈرائیوروں کا کہنا ہے کہ انہیں کچھ ہی میٹر کے فاصلے پر پانچ سو روپیہ فیس دینی پڑتی ہے اور پارکنگ کے لئے جگہ بھی نہیں ہے۔ادھر میونسپل حکام نے کہا کہ سات برس قبل ٹریفک جام کو مدنظر رکھتے ہوئے یہ فیصلہ کیا گیا تھا۔انہوں نے ایک دو ماہ میں انٹری پوائنٹ ہٹانے کی بات کہی ۔

براہ راست ٹی وی تازہ ترین