ہوم » ویڈیو » وسطی ہندوستان

بی جے پی میڈیکل سیل نے حمیدیہ اسپتال کا نام بدل کر ڈاکٹر این پی مشرا اسپتال رکھنے کے لئے بھیجا میمورنڈم

مدھیہ پردیش میں مسلم تشخص کے نام کو بدلنے کی سیاست اپنے عروج پر پہنچ گئی ہے ۔ حبیب گنج اسٹیشن کا نام بدل کر رانی کملا پتی اسٹیشن رکھنے کا معاملہ ابھی سرد بھی نہیں پڑا تھا کہ مدھیہ پردیش کے سب سے بڑا سرکاری حمیدیہ اسپتال اور حبیب گنج تھانہ کا نام بھی بدلنے کی تحریک شروع ہوگئی ہے۔ واضح رہے کہ حمیدیہ اسپتال کا نام بھوپال ریاست کے آخری فرمانروا نواب حمیداللہ خان کے نام پر رکھا گیاتھا اور یہ نام انضمام ریاست کی رو سے رکھا گیاتھا۔اسی طرح حبیب گنج کا علاقہ نواب بھوپال کے بھتیجہ حبیب اللہ خان کو دودہ جاگیر کے طور پر دیاگیاتھا اور اسی علاقہ میں پولیس تھانہ قائم ہونے سے اسکا نام حبیب گنج تھانہ اور اسٹیشن قائم ہونے سے حبیب گنج اسٹیشن رکھا گیاتھا۔وزیر داخلہ ڈاکٹر نروتم مشرا کا بھی کہنا ہے کہ نام بدلنے کو لیکر انہیں میمورنڈم دیاگیا ہے۔حمیدیہ اسپتال کا نام بدل کر ڈاکٹراین پی مشرا اسپتال رکھنے کی تجویزایم پی بی جے پی چکتسا پرکوشٹھ نے کی ہے ۔مسلم تنظیموں نے نام بدلنے پر اپنے سخت رد عمل کا اظہار کیا ہے۔

وسطی ہندوستان| News18 Urdu | Nov 22, 2021 02:49 PM IST

مدھیہ پردیش میں مسلم تشخص کے نام کو بدلنے کی سیاست اپنے عروج پر پہنچ گئی ہے ۔ حبیب گنج اسٹیشن کا نام بدل کر رانی کملا پتی اسٹیشن رکھنے کا معاملہ ابھی سرد بھی نہیں پڑا تھا کہ مدھیہ پردیش کے سب سے بڑا سرکاری حمیدیہ اسپتال اور حبیب گنج تھانہ کا نام بھی بدلنے کی تحریک شروع ہوگئی ہے۔ واضح رہے کہ حمیدیہ اسپتال کا نام بھوپال ریاست کے آخری فرمانروا نواب حمیداللہ خان کے نام پر رکھا گیاتھا اور یہ نام انضمام ریاست کی رو سے رکھا گیاتھا۔اسی طرح حبیب گنج کا علاقہ نواب بھوپال کے بھتیجہ حبیب اللہ خان کو دودہ جاگیر کے طور پر دیاگیاتھا اور اسی علاقہ میں پولیس تھانہ قائم ہونے سے اسکا نام حبیب گنج تھانہ اور اسٹیشن قائم ہونے سے حبیب گنج اسٹیشن رکھا گیاتھا۔وزیر داخلہ ڈاکٹر نروتم مشرا کا بھی کہنا ہے کہ نام بدلنے کو لیکر انہیں میمورنڈم دیاگیا ہے۔حمیدیہ اسپتال کا نام بدل کر ڈاکٹراین پی مشرا اسپتال رکھنے کی تجویزایم پی بی جے پی چکتسا پرکوشٹھ نے کی ہے ۔مسلم تنظیموں نے نام بدلنے پر اپنے سخت رد عمل کا اظہار کیا ہے۔

براہ راست ٹی وی تازہ ترین