ہوم » ویڈیو » شمالی ہندوستان

آگرہ کی جامع مسجد کے احاطہ میں ترنگا لہرانے پر تنازعہ، مقامی لوگوں نے کیا احتجاج

آگرہ میں جامع مسجد کے احاطہ میں لہرائے گئے ترنگا پر ہوا تنازعہ ختم ہونے کا نام نہیں لے رہا ہے۔ جس شخص نے جامع مسجد احاطہ میں جھنڈا لہرایا تھا اس کے خلاف بڑی تعداد میں لوگ سڑکوں پر نکلے اور احتجاج کیا۔ دراصل پندرہ اگست کو مقامی باشندہ اسلم قریشی اور ترپردیش اقلیتی کمیشن کے چیئرمین اشفاق سیفی نے آگرہ کی جامع مسجد کےاحاطہ میں ترنگا پہرایا تھا۔ اس کے علاوہ وہاں پر بھارت ماتا کی جے کے نعرے بھی لگائے گئے تھے۔ اس کے بعد شہر مفتی نے اسلم قریشی کو دھکی بھرے لہجہ میں آڈیو بھیجا تھا ۔اس معاملے میں اسلم قریشی نے مفتی کے خلاف کیس درج کرایا تھا۔ کیس درج ہونے کے بعد بڑ تعداد میں لوگ مفتی کی حمایت اور اسلم قریشی کی مخالفت میں سڑکوں پر نکلے.

شمالی ہندوستان| News18 Urdu | Aug 19, 2021 06:22 PM IST

آگرہ میں جامع مسجد کے احاطہ میں لہرائے گئے ترنگا پر ہوا تنازعہ ختم ہونے کا نام نہیں لے رہا ہے۔ جس شخص نے جامع مسجد احاطہ میں جھنڈا لہرایا تھا اس کے خلاف بڑی تعداد میں لوگ سڑکوں پر نکلے اور احتجاج کیا۔ دراصل پندرہ اگست کو مقامی باشندہ اسلم قریشی اور ترپردیش اقلیتی کمیشن کے چیئرمین اشفاق سیفی نے آگرہ کی جامع مسجد کےاحاطہ میں ترنگا پہرایا تھا۔ اس کے علاوہ وہاں پر بھارت ماتا کی جے کے نعرے بھی لگائے گئے تھے۔ اس کے بعد شہر مفتی نے اسلم قریشی کو دھکی بھرے لہجہ میں آڈیو بھیجا تھا ۔اس معاملے میں اسلم قریشی نے مفتی کے خلاف کیس درج کرایا تھا۔ کیس درج ہونے کے بعد بڑ تعداد میں لوگ مفتی کی حمایت اور اسلم قریشی کی مخالفت میں سڑکوں پر نکلے.

براہ راست ٹی وی تازہ ترین